انڈسٹریز، ریسٹورنٹس، میرج ہال اور سینما تھیٹرکھولنے کا اصولی فیصلہ،این سی او سی کو تجاویز پیش

جم ،ان ڈور سپورٹس ،بیوٹی سیلون او رکلینک وغیرہ کھولنے کا فیصلہ بھی این سی او سی کی اجازت سے مشروط مری اور پنجاب کے دیگر سیاحتی مقامات کھولنے کی تجویز پر غور، حتمی فیصلہ این سی او سی کرے گی ْتعلیمی ادارے کھولنے کے لئے کابینہ کمیٹی برائے کورونا کنٹرول کا خصوصی اجلاس بلایا جائے گا وزیراعلی عثمان بزدار کی ہدایت پر کابینہ کمیٹی برائے کورونا کنٹرول کا خصوصی اجلاس ،صوبائی وزراء او رافسران کی شرکت

منگل اگست 22:43

انڈسٹریز، ریسٹورنٹس، میرج ہال اور سینما تھیٹرکھولنے کا اصولی فیصلہ،این ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 04 اگست2020ء) وزیراعلی پنجاب سردارعثمان بزدار کی ہدایت پر کابینہ کمیٹی برائے کورونا کنٹرول کا خصوصی اجلاس منعقد ہوا، اجلاس میں انڈسٹریز، ریسٹورنٹس، میرج ہال اور سینما تھیٹرکھولنے کا اصولی فیصلہ کیا گیا- حتمی منظوری کے لئے نیشنل کنٹرول اینڈ آپریشن سنٹر کو سفارشات او رتجاویز پیش کی جائیں گی-اجلاس میں جم ،ان ڈور سپورٹس،بیوٹی سیلون او رکلینک وغیرہ کھولنے کا فیصلہ بھی این سی او سی کی اجازت سے مشروط کر دیا گیا ہی-مری اور پنجاب کے دیگر سیاحتی مقامات کھولنے کی تجویز پر غور کیا گیا تاہم اس پر بھی حتمی فیصلہ این سی او سی کرے گی -اجلاس میں فیصلہ کیا گیاکہ پنجاب میں معاشی سرگرمیوں کے فروغ کے لئے کنسٹرکشن انڈسٹری سے متعلقہ دیگر کاروبار بھی کھول دئیے جائیں گے -تعلیمی ادارے کھولنے کے لئے کابینہ کمیٹی برائے کورونا کنٹرول کا خصوصی اجلاس بلایا جائے گا-اجلاس میں بریفنگ کے دوران بتایا گیاکہ پنجاب میں کورونا پازیٹو کیسز کی تعداد 2سے 3فیصد تک ہی-صوبہ بھر میں کورونا کے خدشے کے پیش نظر 3ہزار بیڈز بدستور مختص رکھے جائیں گی- ہسپتال کورونا فری قرار دے کر معمول کی طبی خدمات کے لئے اوپن ہوںگی-ہسپتالوں میں معمول کی بیماریوں کا علاج، آپریشن اور دیگر سروسز معمول کے مطابق فراہم کی جائیں گی-گزشتہ 24گھنٹے کے دوران کورونا کے 39کیس رپورٹ جبکہ 5مریض جاںبحق ہوئی-صوبائی وزراء ڈاکٹر یاسمین راشد،میاں اسلم اقبال،ہاشم جواں بخت،چیف سیکرٹری، سینئرممبربورڈآف ریونیو،پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ،سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر، سیکرٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ، سیکرٹری اطلاعات،ڈپٹی کمشنر لاہور،ڈی جی فوڈ اتھارٹی اوردیگر متعلقہ حکام بھی اس موقع پر موجود تھی-

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments