اورنج لائن ٹرین آپریشنل ہوگئی

ہزاروں مسافروں نے سفر کیا اورنج ٹرین میں سفر کرنے والے بیشتر مسافروں نے اپنے شوق کو مد نظر رکھتے ہوئے ٹرین کا سفر کیا اور منصوبے پر خوشی کا اظہار

پیر اکتوبر 19:38

اورنج لائن ٹرین آپریشنل ہوگئی
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 26 اکتوبر2020ء) سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے دورے حکومت میں قائم کئے گئے لاہور کے میگا پراجیکٹ اورنج لائن ٹرین نے باقاعدہ اپنی آمد و رفت کا آغاز کردیا ہے۔ اس سلسلے میں پیر کی صبح ساڑھے سات بجے ڈیرہ گجراں اور علی ٹائون سے پانچ پانچ بوگیوں پر مشتمل ایک ایک ٹرین رواں ہوئی۔ جس میں ہزاروں مسافروں نے سفر کیا اورنج ٹرین میں سفر کرنے والے بیشتر مسافروں نے اپنے شوق کو مد نظر رکھتے ہوئے ٹرین کا سفر کیا اور منصوبے پر خوشی کا اظہار کیا ہے۔

اورنج لائن ٹرین منصوبے کے تحت 45 منٹ میں 27 کلو میٹر کا فاصلہ طے کرے گی۔ فاصلہ طے کرے گی ٹرین کے 27.1 کلو میٹر کے فاصلے میں مجموعی طور پر 26 ریلوے سٹیشن واقع ہیں۔ جن پر ہر ٹرین کا 40 سیکنڈ کے لئے سٹاپ دیا گیا ہے اورنج لائن ٹرین کے روٹ پر مجموعی طور پر 22 ٹرینیں چلائی جائیں گی۔

(جاری ہے)

جن کا کرایہ 40 روپے فی کس مقرر کیا گیا ہے۔ جبکہ ہر ٹرین میں خواتین اور خصوصی افراد کے بیٹھنے کے لئے الگ الگ جگہیں مقرر کی گئیں ہیں۔

یہ بھی بتایا گیا ہے کہ ٹرین سمیت ٹرین کے 26 ریلوے سٹیشنوں کی صفائی کا ٹھیکہ لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کو سات سال کے لئے دیا گیا ہے۔ کمپنی نے صفائی کا کام شروع کردیا ہے۔ جس پر ماہانہ خرچہ تین کروڑ 60 لاکھ روپے آئے گا جبکہ ماسک ٹرانزٹ کمپنی اس مد سالانہ 43 کروڑ 26 لاکھ روپے خرچ کرے گی واضح رہے کہ گزشتہ روز اورنج لائن ٹرین میں سفر کرنے والے مسافروں نے ڈیرہ گجراں سے علی ٹائون تک شہر کی تاریخی عمارتوں سمیت مختلف علاقوں اور شاہراہوں کا نظارہ لیا اور ٹریک کے سفر سے لطف اندوز ہوتے رہے۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments