مریم نواز ،حواریوں کا میت والا گھر ہونے کے باوجود سیاسی بیان بازی سے گریز نہ کرنا قابل مذمت ہے‘ مسرت چیمہ

آپ جیلوں میں بعد میںجاتے ہیں ، گھر سے کھانا اور امپورٹڈ ادویات کی سہولتوں کی درخواستیں پہلے جمع کر ادیتے ہیں‘ چیئر پرسن قائمہ کمیٹی داخلہ

ہفتہ نومبر 13:05

مریم نواز ،حواریوں کا میت والا گھر ہونے کے باوجود سیاسی بیان بازی سے ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 28 نومبر2020ء) چیئر پرسن قائمہ کمیٹی داخلہ مسرت جمشید چیمہ نے کہا ہے کہ مریم نواز اور ان کے حواریوں کا میت والا گھر ہونے کے باوجود سیاسی بیان بازی سے گریز نہ کرنا قابل مذمت ہے ، کسی بھی قید ی کی پیرول پر رہائی کیلئے قانون و ضابطے مکمل کرنا ہوتے ہیں اور شہباز شریف اور حمزہ شہباز کے معاملے میں بھی یہی کیا گیا ہے ، کورونا کی دوسری لہر شدت اختیار کر رہی ہے اس لئے اپوزیشن ہوش کے ناخن لے اور ملک کو مزید مشکلات کی دلدل میںنہ دھکیلے ۔

میڈیا کیلئے جاری کئے گئے اپنے ویڈیو بیان میں مسرت جمشید چیمہ نے کہا کہ جس روز سے محترمہ بیگم شمیم اختر کا انتقال ہوا اسی روز سے مریم نواز اور ان کے حواریوںکی جانب سے سیاسی بیان بازی میں شدت لائی گئی ہے ۔

(جاری ہے)

گھر میں تعزیت کے لئے آنے والے صحافیوں سے بھی سیاسی گفتگو کی گئی اور اس میںہمدردیاں سمیٹنے کی کوشش کی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ آپ جیلوں میں بعد میںجاتے ہیں اور گھر سے کھانا اور امپورٹڈ ادویات منگوانے کی سہولتوں کیلئے درخواستیں پہلے جمع کر ادیتے ہیں ۔

چوہوں کا بچا کھانا ،فنگس والی اددویات دینے اور ناروا سلوک کے بیان پر ان کی جماعت کے رہنما حیران ہیں اور ان کے پاس دلیل کے ساتھ کوئی جواب نہیں ۔انہوںنے کہا کہ مریم نواز نے پہلے اپنے والد کی سیاست کو اپنے ہاتھوںسے دفن کیا اور اب پوری جماعت کے پیچھے ہاتھ دھو کر پڑی ہوئی ہیں جس کا ان کی جماعت میں بر ملا اظہار بھی کیا جارہا ہے۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments