لاہور جلسے کے بعداگلا پڑائو اسلام آبادہوگا،حکومت عوام کے سمندر کے سامنے جھاگ کی طرح بہہ جائیگی‘ احسن اقبال

پی ڈی ایم کی تحریک سیاسی نہیںبلکہ قو می اورپاکستان بچانے کی تحریک بن چکی ہے ،نواز شریف جلسے سے خطاب کریں گے پاکستان کی خارجہ پالیسی کو کشکول پالیسی میںتبدیل کردیاگیا ،گداگری کی بدولت آج ہمارے قریب دوست ممالک ہم سے دور ہو گئے

بدھ دسمبر 23:44

لاہور جلسے کے بعداگلا پڑائو اسلام آبادہوگا،حکومت عوام کے سمندر کے ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 02 دسمبر2020ء) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سیکرٹری جنرل احسن اقبال نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کی تحریک سیاسی نہیںبلکہ قو می اورپاکستان بچانے کی تحریک بن چکی ہے ، پاکستان کی خارجہ پالیسی کو کشکول پالیسی میںتبدیل کردیاگیا ،گداگری کی بدولت آج ہمارے قریب دوست ممالک ہم سے دور ہو گئے ہیں ،جس طرح کی کارروائی نواز شریف کے خلاف ہو رہی ہے کاش اس طرح کی کارروائی انکے خلاف بھی ہو جن کے خلاف آرٹیکل6کافیصلہ آیا،13دسمبر کولاہورکے جلسے کے بعد اگلاپڑائو اسلام آبادمیں ہوگا اور عوام کے سمندر کے سامنے حکومت جھاگ کی طرح بہہ جائے گی ۔

ان خیالات کا اظہارانہوںنے جاتی امراء رائے ونڈ میں پارٹی کری مرکز ی قیادت کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔

(جاری ہے)

اجلاس میں شاہد خاقان عباسی ، مریم نواز، خواجہ سعد رفیق، احسن اقبال، رانا ثنااللہ ،مریم اورنگزیب، عطا اللہ تارڑ سمیت دیگر شریک ہوئے ۔ اجلاس میں 13دسمبر کولاہور میں پی ڈی ایم کے جلسے کی تیاریوں،حکومت کی ممکنہ رکاوٹوں سمیت آئندہ کی حکمت عملی بارے تبادلہ خیال کیا گیا ۔

احسن اقبال نے کہا کہ اجلاس میں 13دسمبر کے جلسے کے حوالے سے تفصیلی بات چیت کی گئی او ر جلسے کے انتظامی معاملات پر غور کیا گیا ۔پی ڈی ایم کی تحریک اب سیاسی نہیں بلکہ قومی اور پاکستان بچانے کی تحریک بن گئی ہے ،13دسمبر کو پاکستان کی تاریخ کا سب سے بڑا جلسہ ہو گا۔انہوں نے کہا کہ آج پاکستان دنیا میں تنہا کھڑا ہے خارجہ پالیسی کو کشکول پالیسی بن گئی،گداگری کی وجہ سے پاکستان کے قریب ترین دوست پیچھے ہٹ گئے ہیں،پاکستان کوبچانے کے لئے اس حکومت کا جانا ضروری ہے ،یہ اناڑی ،نالائق اور ناتجربہ کار حکومت ہے، اس حکومت کو مزید برداشت کرنا ملک کے مستقبل کے ساتھ کھیلنے کے مترادف ہے ۔

انہوں نے کہا کہ آدھی حکومت ملتان میں کارکنوںکو روکنے اور آدھی حکومت رکاوٹیںنہ ڈالنے کے حق میں تھی،جو حکومت ایک جلسے کے لئے منصوبہ بندی نہ کر سکے وہ ملک کی معیشت ،دفاعی اورخارجہ چیلنجز کے لئے کیا پالیسیاں بنائے گی ۔انہوں نے کہا کہ13دسمبر کے بعد ہمارا اگلا پڑائو اسلام آباد ہو گا،پورے ملک سے عوام اسلام آباد اکٹھے ہوں گے تو یہ حکومت جھاگ کی طرح بہ جائے گی ۔انہوںنے کہا کہ اگر ملتان کی طرح لاہور میں پکڑ دھکڑ کی گئی تو پورا لاہور جلسہ گاہ بن جائے گا ۔وکلا، اقلیتیں،طالبعلم ،مزدور حتیٰ کہ ہر طبقے سے لوگ جلسے میں شامل۔ہوں گے ،نواز شریف لاہور جلسے سے خطاب کریں گے ۔اسلام آبادکی طرف لانگ مارچ عمران خان سے نجات حاصل کرنے کے لئے ہوگا۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments