نارووال اسپورٹس سٹی ریفرنس ، احسن اقبال کے خلاف وعدہ معاف گواہ سامنے آگیا

بیمار ہوں اور علاج کی غرض سے امریکا جانا چاہتا ہوں ، سیکشن 26 کے تحت معاف کرکے کیس میں گواہ بنایا جائے ، شریک ملزم آصف شیخ نے درخواست دائر کردی

Sajid Ali ساجد علی بدھ جنوری 17:43

نارووال اسپورٹس سٹی ریفرنس ، احسن اقبال کے خلاف وعدہ معاف گواہ سامنے ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 جنوری2021ء) نارووال اسپورٹس کمپلیکس ریفرنس میں مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال کے شریک ملزم وعدہ معاف گواہ بننے پر تیار ہوگئے۔ اس حوالے سے موصول ہونے والی تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال کے شریک ملزم آصف شیخ نے وعدہ معاف گواہ بننے کے لیے درخواست دائر کر دی ، جس میں کہا گیا ہے کہ وہ بیمار ہیں اور علاج کی غرض سے امریکا جانا چاہتے ہیں ، اس لیے انہیں سیکشن 26 کے تحت معاف کرکے کیس میں گواہ بنایا جائے۔

بتایا گیا ہے کہ احتساب عدالت لاہور میں مسلم لیگ ن کے رہنماء احسن اقبال کے خلاف نارووال اسپورٹس سٹی کمپلیکس سے متعلق ریفرنس پر سماعت ہوئی ، سابق وزیر داخلہ احسن اقبال عدالت میں پیش ہوئے ، اس موقع پر احسن اقبال کے وکیل نے سماعت ملتوی کرنے کی استدعا کردی ، انہوں موقف اختیار کیا کہ مسعود چشتی کی بریت کا فیصلہ اس کیس پر بھی اثرانداز ہوتا ہے ، جس کی بنیاد پر احسن اقبال کی بریت کی درخواست دائر کرنا چاہتے ہیں۔

(جاری ہے)

دوسری طرف سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور ان کے خاندان کے خلاف دائر منی لانڈرنگ ریفرنس میں ایک اور وعدہ معاف گواہ نے اہنا بیان ریکارڈ کروادیا ، ملزم شاہد رفیق کی طرف سے منی لانڈرنگ کا اعتراف بھی کرلیا گیا ، سچائی بیان کرنے پر معافی کی بھی استدعا کردی۔ تفصیلات کے مطابق ملزم شاہد رفیق نے اپنے بیان میں بتایا کہ شہباز شریف خاندان کے لیے 24 لاکھ 30 ہزار 145 امریکی ڈالرز کی ٹی ٹیز لگوائی گئیں ، برطایہ سے پاکستان منگوائی جانے والی اس تمام رقم کی ٹی ٹیز شہباز شریف کے بیٹوں حمزہ شہباز ، سلمان شہباز اور بیٹی رابعہ عمران کے اکاؤنٹس میں لگوائی جاتی رہیں۔

وعدہ معاف گواہ کے مطابق پاکستان میں رقم قاسم قیوم ، مختار احمد اور محمد رفیق کی طرف سے فراہم کی جاتی تھیں ، جس کے بدلے میں پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز اور اس کا سٹاف انہیں کمیشن بھی دیتا تھا جو ماڈل ٹاؤن سے وصول کیا جاتا تھا ، اس کے ساتھ ساتھ ایک آفتاب احمد نامی شخص کی طرف سے برطانیہ سے ایک نجی بینک کی سرکلر روڈ پر واقع برانچ میں حمزہ شہباز ، سلمان شہباز اور رابعہ عمران کے اکاؤنٹس میں پیسے بھیجے جاتے تھے۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments