چھٹی کے دن بھی لاہور میں فضائی آلودگی کم نہ ہوئی‘ دنیا بھر میں پہلا نمبر برقرار

ٹریفک میں شدید کمی کے باوجود لاہور کی فضا میں موجود آلوگی میں کمی نہ آسکی اور صوبہ پنجاب کے دارالحکومت کی فضا میں پرٹیکیولیٹ میٹرز کی تعداد282ریکارڈ کی گئی

Sajid Ali ساجد علی اتوار 5 دسمبر 2021 10:37

چھٹی کے دن بھی لاہور میں فضائی آلودگی کم نہ ہوئی‘ دنیا بھر میں پہلا نمبر برقرار
لاہور ( اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین ۔ 5 دسمبر 2021ء ) چھٹی کے دن بھی لاہور میں فضائی آلودگی کم نہ ہوئی اور دنیا بھر میں آلودہ ترین شہروں میں پنجاب کے صوبائی دارالحکومت کا پہلا نمبر برقرار ہے۔ تفصیلات کے مطابق اسکولوں اور دفاتر سے اتوار کی ہفتہ وار چھٹی کے باعث ٹریفک میں شدید کمی کے باوجود لاہور کی فضا میں موجود آلوگی میں کمی نہ آسکی اور صوبہ پنجاب کے دارالحکومت کی فضا میں پرٹیکیولیٹ میٹرز کی تعداد 282 ریکارڈ کی گئی جب کہ گزشتہ روز یہ تعداد 311 تھی ۔

ادھر وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت فضائی آلودگی کی صورتحال پر جائزہ اجلاس ہوا ، جس میں وزیراعظم عمران خان نے بڑھتی ماحولیاتی آلودگی کو کم کرنے کیلئے ایکشن پلان پر عملدرآمد کیلئے ایک ماہ کا وقت دے دیا ، اجلاس میں وزیراعظم کو 15 نکاتی ایکشن پلان پیش کیا گیا ، وزیراعظم نے بڑھتی فضائی آلودگی پر اظہار تشویش کیا ، اجلاس میں وزیراعظم عمران خان کو اسموگ کی صورتحال پر بریفنگ دی گئی۔

(جاری ہے)

وزیراعظم عمران خان کو ایکشن پلان رپورٹ سے متعلق بتایا گیا کہ الیکٹرک و ہیکلزپالیسی پر عملدرآمد کرانے کی سفارش کی گئی ہے، پاکستان میں یوروفائیو پٹرول درآمد کرنے کی بھی سفارش کی گئی ہے ، رپورٹ میں تجویز دی گئی ہے کہ فصلوں کی باقیات تلف کرنے کیلئے جدید طریقہ اپنایا جائے گا ، موٹرسائیکل رکشہ کو الیکٹرک انجن پر منتقل کیا جائے گا جب کہ اسلام آباد میں مارچ سے الیکٹرک بسیں سڑکوں پر آجائیں گی۔

قبل ازیں صوبہ پنجاب میں سموگ کے تدارک کے لیے لاہور ہائی کورٹ آلودگی کا باعث بننے والی فیکٹریوں کو سیل کرنے کا حکم بھی دے چکی ہے، لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد کریم نے شیراز ذکاء ، آفتاب ورک اور ابو ذرسلمان خان نیازی کی درخواستوں پر سماعت کی ، جس میں سموگ کی روک تھام کیلئے اقدامات کرنے اور مکمل لاک ڈوان کی استدعا کی گئی ۔ دوران سماعت عدالتی حکم پر میئر لاہور کرنل ریٹائرڈ مبشر جاوید لاہور ہائیکورٹ میں پیش ہوئے جہاں انہوں نے موقف اپنایا کہ ان کو صرف 8 فیصد بجٹ استعمال کرنے کی اجازت دی گئی ہے جب کہ مکمل اختیارات بھی نہیں دیے جا رہے ، اس پر عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ آگے الیکشن آ رہے ہیں آپ لاہور کی خدمت کریں ، لاہور کو ایسے ہی صاف کرنا ہے ، جیسے ہمارا گھر ہوتا ہے ، جسٹس شاہد کریم نے مئیر لاہور کو فوکل پرسن مقرر کرنے کا بھی حکم دے دیا ۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments

>