مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کیلئے یہ بڑی مشکل گھڑی ہے،محمد مرزا جاوید

نواز شریف علاج کے لیے باہر جائیں اور وہ ان کے ساتھ نہ جائیں، ایم پی اے

جمعہ نومبر 22:45

رائے ونڈ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 08 نومبر2019ء) ایم پی اے محمد مرزا جاوید نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کیلئے یہ بڑی مشکل گھڑی ہے کہ نواز شریف علاج کے لیے باہر جائیں اور وہ ان کے ساتھ نہ جائیں۔انہوں نے بتایا کہ مریم نواز چوہدری شوگر ملز منی لانڈرنگ کیس میں احتساب عدالت میں پیش ہوئیں۔ جہاںمریم نواز نے عدالت میں بیان دیا کہ ایسا کیسے ہو سکتا تھا کہ عدالت میں بلایا جائے اور میں نہ آؤں، آج بھی میں والد نواز شریف کو چھوڑ کر آئی ہوں۔

رہنماء ن لیگ نے عدالت کو بتایا کہ میاں صاحب کی طبیعت کافی ناساز ہے۔مریم نواز کے وکیل امجد پرویز نے عدالت سے استدعا کی کہ ریفرنس دائر ہونے تک حاضری سے استثنیٰ دیا جائے کیونکہ قانون میں اس کی گنجائش موجود ہے۔

(جاری ہے)

جس پر(ن) لیگ کی نائب صدر مریم نواز کو رہا کردیا گیا،عدالت نے نیب کے تفتیشی افسر سے ریفرنس دائر کرنے سے متعلق استفسار کیا اور مریم نواز کے وکیل سے کہا کہ آپ درخواست دائر کریں پھر بعد میں اس پر فیصلہ ہو گا۔

عدالت نے نواز شریف کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کر لی جب کہ یوسف عباس کے جوڈیشل ریمانڈ میں 14 روز کی مزید توسیع کر دی گئی۔ کیس کی سماعت 22 نومبر تک ملتوی کر دی گئی۔مریم نواز نے بتایا کہ وہ میاںنواز شریف کو ملازمین اور نرسوں کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑ سکتیں،انہوں نے کہا کہ میاں صاحب کو علاج کے لیے فوری باہر جانا چاہئے،ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے نام نکالنے سے متعلق درخواست پر رہنما ء ن لیگ نے کہا کہ مجھے نہیں پتا، گھر جا کر دیکھوں گی، شہباز شریف اس معاملے کو دیکھ رہے ہیں۔

مریم نواز نے مزید کہا کہ میں ابھی فوری سفر نہیں کر سکتی کیونکہ میرا پاسپورٹ عدالت کے پاس ہے۔انہوں نے بتایا کہ مریم نواز کا پاسپورٹ، 2 کروڑ کے مچلکہ اور 7 کروڑ نقد عدالت میں جمع ہیں۔مرزا جاوید نے ساتھیوں سمیت نوازشریف کی جلد صحت یابی اور درازی عمر کیلئے دعا بھی کی۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments