مولانا ظفر علی خان نے اپنی تحریر و تقریرسے مسلمانان برصغیر میں آزادی کی تڑپ پیدا کرنے میں کردار ادا کیا،مقررین

ہفتہ دسمبر 17:48

لاہور۔5دسمبر  (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 05 دسمبر2020ء) :مولانا ظفر علی خان نے اپنی تحریر و تقریر کے ذریعے مسلمانان برصغیر میں آزادی کی تڑپ پیدا کرنے میں اہم کردار ادا کیا۔ وہ ایک جرات مند صحافی، شاعر، ادیب اور مقرر تھے۔آپ نے اپنی پوری زندگی اسلامیان ہند کی فلاح وبہبود کیلئے وقف کر رکھی تھی۔ انکا نبی کریم سے عشق مثالی تھا جس کا اظہار آپ کے کلام میں جا بجا ملتا ہے۔

ان خیالات کااظہار مقررین نے تحریک پاکستان کے رہنما بابائے صحافت، قادرالکلام شاعر اورآل انڈیا مسلم لیگ کے بانی رکن مولانا ظفر علی خان کی64ویں برسی کے سلسلے میں منعقدہ خصوصی آن لائن نشست کے دوران کیا۔چیئرمین نظریہ پاکستان ٹرسٹ محمد رفیق تارڑ نے کہا کہ مولانا ظفر علی خان ایک ہمہ جہت شخصیت تھے۔

(جاری ہے)

تحریک پاکستان میں ان کا بے مثال کردار ہماری قومی تاریخ کے ماتھے کا جھومر ہے۔

انہوںنے آل انڈیا مسلم لیگ کی تنظیم سازی اور اسے ایک عوامی جماعت کا روپ دینے کی خاطر برصغیر کے دُوردراز گوشوں کا سفر طے کیا۔ 23مارچ1940کو آل انڈیا مسلم لیگ کے تاریخ ساز اجلاس میں قراردادِ پاکستان کا فی البدیہہ اردو ترجمہ کیا۔ اپنے اخبار ”زمیندار“ کو اس قرارداد کی تشریح اور تشہیر کے لیے بھرپور انداز میں استعمال کیا۔ قائداعظم محمد علی جناح ان کی خداداد قابلیت اور صلاحیتوں کے بڑے معترف تھے۔

مولانا ظفر علی خان بے باک صحافی تھے۔ ان کا قلم اسلام دشمنوں کے لیے برہنہ شمشیر کی مانند تھا۔ چیئرمین مولانا ظفر علی خان ٹرسٹ خالد محمود نے کہا کہ مولانا ظفر علی خان کو ہم سے رخصت ہوئے 64برس بیت چکے ہیں لیکن ان کی یاد آج بھی ہمارے دلوں میں زندہ ہے۔وہ ہمہ جہت شخصیت تھے۔ وہ بیک وقت سیاستدان، صحافی ، مقرر تھے۔ تحریک آزادی میں ان کی طویل جدوجہد ہے۔

ممتاز دانشور اور صحافی مجیب الرحمن شامی نے کہا کہ مولانا ظفر علی خان ہماری قومی تاریخ کا ناقابل فراموش کردار ہے۔آپ ان لوگوں میں سے تھے جنہوں نے اپنی محنت اور ذہانت کے بل بوتے پر زندگی میں کامیابیاں حاصل کیں ۔ انہوں نے نئی نسل کو بھی جہد مسلسل اور تعلیم حاصل کرنے کی ترغیب دی ، ان کا نئی نسل کیلئے پیغام ہے کہ اچھے طالب علم بنیں۔ مولانا ظفر علی خان نے اپنے شعر ”خدا نے آج تک اس قوم کی حالت نہیں بدلی ، نہ ہو خیال جس کو آپ اپنی حالت کے بدلنے کا “ کے ذریعے قوم کو بہترین پیغام دیا اور آپ نے مسلمان قوم کی حالت بدلنے میں اپنا نمایاں کردار ادا کیا۔

معروف کالم نگار رﺅف طاہر نے کہا کہ مولانا ظفر علی خان نے تحریک پاکستان میں عظیم الشان کردار ادا کیا۔ آپ کا شمار مسلم لیگ کے بانی اراکین میں ہوتا ہے۔ آپ قائداعظم کے معتمد ساتھی تھے۔ مولانا ظفر علی خان دوقومی نظریہ کی علمبردار تھے۔ سیکرٹری نظریہ پاکستان ٹرسٹ شاہد رشید نے کہا کہ مولانا ظفر علی خان کی حیات و خدمات کا مطالعہ ہمارے اندر ایک جوش اور ولولہ پیدا کر دیتا ہے۔ انہوں نے قیام پاکستان کی تحریک میں گرانقدر خدمات انجام دیں ۔ آپ نے اپنی جان و مال اور تن من دھن ملت اسلامیہ کیلئے وقف کیا ہوا تھا۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments