پنجاب حکومت کاسرکاری محکموں میں خالی آسامیوں پر بھرتی کا فیصلہ کرلیا

افرادی قوت کی کمی کو پورا کرنے کیلئے محکموں میں گریڈ 1تا15میرٹ کی بنیاد پر بھرتیاں کی جائیں گی‘چیف سیکرٹری کی زیر صدارت اجلاس

ہفتہ 16 اکتوبر 2021 18:38

پنجاب حکومت کاسرکاری محکموں میں خالی آسامیوں پر بھرتی کا فیصلہ کرلیا
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 اکتوبر2021ء) پنجاب حکومت نے سرکاری محکموں میں خالی آسامیوں پر بھرتی کا فیصلہ کرلیا ،افرادی قوت کی کمی کو پورا کرنے کیلئے محکموں میں گریڈ 1تا15میرٹ کی بنیاد پر بھرتیاں کی جائیں گی۔چیف سیکرٹری پنجاب کامران علی افضل کی زیرصدارت سول سیکرٹریٹ میں سیکرٹریز کانفرنس ہوئی جس میں ہدایات جاری کی گئیں۔

اجلاس میں سالانہ ترقیاتی پروگرام، پاکستان سٹیزن پورٹل، ڈینگی، کورونا ، زیر التواء انکوائریز اور پنشن کیسز کا جائزہ لیا گیا۔چیف سیکرٹری پنجاب نے کہا کہ یقینی بنایا جائے کہ بھرتیاں صرف میرٹ پر ہوں، کسی کی حق تلفی نہیں ہونی چاہیے ۔ انہوںنے کہا کہ مافرادی قوت کی کمی پورا کرنے سے محکموں کی کارکردگی میں بہتری آئے گی،محکموںمیں تقرر وتبادلے سوچ سمجھ کر اور کارکردگی کی بنیاد پر کئے جائیں۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہا کہ ترقیاتی سکیمیں سماجی معاشی ترقی میں کلیدی کردار ادا کرتی ہیں،ترقیاتی پروگرام میں فنڈز کے بروقت استعمال اور شفافیت کو یقینی بنایا جائے،ترقیاتی منصوبوں کی مقررہ وقت میں تکمیل کیلئے محکمے محنت سے کام کریں۔ انہوںنے کہا کہ چیف ترقیاتی سکیموں پر پیشرفت کا ہر ماہ باقاعدگی سے جائزہ لیا جائے گا۔ چیف سیکرٹری نے سکیموں کی منظوری، فنڈز کے اجرا ء کے سلسلے میں چیئرمین پی اینڈڈی اور سیکرٹری خزانہ کی خدمات کی تعریف کی ۔

چیف سیکرٹری نے محکموں کو ڈینگی اور کورونا کے حوالے سے جاری گائیڈ لائنز پر عملدرآمد کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ڈینگی کے حوالے سے مانیٹرنگ، سرویلنس اوررپورٹنگ کے عمل پر خصوصی توجہ دی جائے،ڈینگی لارواکی تلفی اور مچھروں کی افزائش کی ممکنہ جگہوں پر صفائی کیلئے اقدامات کئے جائیں۔ چیف سیکرٹری نے مزید کہا کہ پاکستان سٹیزن پورٹل پر موصول شکایات کا بروقت ازالہ کیا جائے،افسران عوامی خدمت کے جذبے کی ساتھ اپنے فرائض سر انجام دیں۔ چیف سیکرٹری نے ہدایت کی کہ زیر التو اء انکوائریز اور پنشن کیسز کو جلد از جلد نمٹایا جائے۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments