اُردو پوائنٹ پاکستان لاڑکانہلاڑکانہ کی خبریںآئین سے غداری کرنے والے آمر مشرف کو گرفتار کرکے آرٹیکل 6 کے تحت مقدمہ ..

آئین سے غداری کرنے والے آمر مشرف کو گرفتار کرکے آرٹیکل 6 کے تحت مقدمہ چلایا جائے، پیپلز پارٹی لاڑکانہ

لاڑکانہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 فروری2018ء) پاکستان پیپلز پارٹی نے نامور قانوندان عاصمہ جہانگیر کو انسانی حقوق کے لیے آواز اٹھانے اور آمریت کے خلاف جدوجہد کرنے پر زبردست خراج تحسین کرتے ہوئے وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ آئین سے غداری کے مقدمے میں ملوث آمر پرویز مشرف کو گرفتار کرکے ملک میں لاکر ان کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت مقدمہ چلاکر آمریتوں کے خلاف جدوجہد کرنے والوں کے ساتھ انصاف کیا جائے جبکہ عاصمہ جہانگیر کی تدفین سرکاری اعزاز کے ساتھ کی جائے۔

ایسا مطالبہ پاکستان پیپلز پارٹی سٹی لاڑکانہ کی جانب سے گذشتہ روز سر شاہنواز بھٹو آڈیٹوریم ہال میں عاصمہ جہانگیر کے متعلق تعزیتی ریفرنس کے تقریب میں قرارداد منظور کرتے ہوئے کیا۔ قرارداد میں یہ بھی مطالبہ کیا گیا کہ عاصمہ جہانگیر کے نام سے کسی بھی ادارے یا انسٹی ٹیوٹ کو منصوب کیا جائے۔

(خبر جاری ہے)

تعزیتی ریفرنس میں وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ عاصمہ جہانگیر کی خدمات کے عیوض ایک یادگار ٹکٹ جاری کی جائے۔

تعزیتی ریفرنس میں عاصمہ جہانگیر کے لیے ایک منٹ کی خاموشی اختیار بھی کی گئی۔ اپنے خطاب میں پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے صدر اور سینیئر صوبائی وزیر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عاصمہ جہانگیر نے آمر یحیٰ سے لے کر آمر پرویز مشرف تک ہر ڈکٹیٹر کو للکارا اور آمریتوں کے خلاف بھرپور جدوجہد کرتے ہوئے آواز بلند کی۔ آمروں کے ادوار میں ان کے گھر پر حملے بھی ہوئے اور نظربندی بھی برداشت کی لیکن انہوں نے بہادری سے مقابلہ کرکے کبھی گردن نہیں جھکائے۔

تعزیتی ریفرنس میں پیپلز پارٹی ضلعی صدر عبدالفتاح بھٹو، جنرل سیکریٹری خیر محمد شیخ، سٹی کے صدر نور الدین ابڑو، سیکریٹری جنرل محمد امین شیخ، سیکریٹری اطلاعات شکیل میمن، ایڈووکیٹ عنایت موریو، ڈاکٹر سکینہ گاد، ایڈووکیٹ رفیق ابڑو اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

لاڑکانہ شہر کی مزید خبریں