الیکشن سے 6 مہینے پہلے مجھے غلط اور فضول فیصلے سے نااہل کیا گیا، جہانگیر ترین

پی ٹی آئی کی حکومت بننے کے بعد باقاعدہ سازش کے تحت عمران خان سے الگ کردیا گیا، رہنما پی ٹی آئی

منگل 12 اکتوبر 2021 21:49

الیکشن سے 6 مہینے پہلے مجھے غلط اور فضول فیصلے سے نااہل کیا گیا، جہانگیر ترین
لودھراں (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 12 اکتوبر2021ء) تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیر خان ترین نے کہا ہے کہ الیکشن سے 6 مہینے پہلے غلط فیصلے سے مجھے نااہل کیا گیا۔کارنر میٹنگ سے خطاب میں جہانگیر ترین نے کہاکہ میں نے 8 سال دن رات کرکے پی ٹی آئی میں محنت کی۔انہوں نے کہاکہ الیکشن سے 6 مہینے پہلے انہیں غلط اور فضول فیصلے سے نااہل کیا گیا، نااہلی کے باوجود میں نے عمران خان کا ساتھ نہیں چھوڑا۔

(جاری ہے)

دوران خطاب جہانگیر ترین نے کم سیٹوں کے باوجود پنجاب میں پی ٹی آئی حکومت بننے کا کریڈٹ خود کو دیا۔پی ٹی آئی رہنما نے کہاکہ الیکشن ہوا پی ٹی آئی کامیاب ہوئی،لیکن کچھ سیٹں کم ہوئیں ،پھر آپ سب کو پتہ ہے کہ جہاز چلا۔اٴْن کا کہنا تھاکہ ن لیگ سے 8 سیٹیں کم تھیں،اللہ نے کرم کیا اورہماری حکومت بن گئی۔جہانگیر ترین نے کہاکہ پی ٹی آئی کی حکومت بننے کے بعد انہیں باقاعدہ سازش کے تحت عمران خان سے الگ کردیا گیا۔انہوں نے کہاکہ میرے خلاف سازش کرنے والوں کو معلوم تھا کہ یہ ہمارے لیے خطرہ ہے۔

لودھراں شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments