حزب اللہ کے مالی سوتوں سے متعلق معلومات پر 10 ملین ڈالر انعام

انعام کی پیش کش کے بدلے ہمیں حزب اللہ سے منسلک افراد بارے معلومات درکار ہیں ،محکمہ خارجہ

ہفتہ اکتوبر 16:00

واشنگٹن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 24 اکتوبر2020ء) امریکا نے ایرانی حمایت یافتہ حزب اللہ کے مالی سوتوں تک رسائی سے متعلق معلومات دینے والے کو 10ملین ڈالر کا انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق دفتر خارجہ نے بتایاکہ انعام کی پیش کش کے بدلے ہمیں حزب اللہ کی سرگرمیوں، نیٹ ورکس اور تنظیم سے منسلک ان افراد کے بارے میں معلومات درکار ہیں جو اس کے لیے مالی وسائل جمع کرنے کا محور شمار ہوتے ہیں۔

یہ معلومات تنظیم کو سرمایہ فراہم کرنے والے محمد قیصر، محمد قاسم البزال اور علی قیصر جیسے افراد کے بارے میں ہونی چاہیں۔امریکا محمد قیصر کو ایران اور حزب اللہ کے درمیان اہم رابطہ کار سمجھتا ہے۔ قیصر شام سے لبنان اسلحہ کی منتقلی میں سہولت کاروں کا ایک یونٹ چلاتا ہے۔

(جاری ہے)

امریکی دفتر خارجہ کے بقول مذکورہ شخص ایران کے انقلابی گارڈز کے بیرون ملک آپریشن کی نگرانی کرنے والی القدس فورس کا رابطہ کار ہے۔

بیان میں البزال کو القدس فورس اور انقلابی گارڈز کا مرکزی سرمایہ کار بتایا گیا ہے۔البزال اور علی قیصر حزب اللہ سے وابستہ بے نامی کمپنیوں کے فرنٹ مین ہیں جو سٹیل انڈسٹری کے لیے کام کرتے ہیں۔ وہ ایرانی خام تیل کی شام ترسیل میں بھی معاونت کرتے ہیں۔ امریکی وزارت خزانہ ماضی میں مذکورہ تینوں اشخاص کو خصوصی عالمی دہشت گرد قرار دے چکی ہیں۔

مری شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments