ٹرمپ کو پنسلوانیا میں منہ کی کھانی پڑ گئی،جج نے دھاندلی کا دعویٰ مستردکردیا

ٹرمپ نے ڈاک کے ذریعے ووٹوں بارے جو قانونی نکات پیش کیے وہ میرٹ کے بغیر اور افواہوں پر مبنی ہیں،جج کے ریمارکس

اتوار نومبر 12:50

واشنگٹن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 22 نومبر2020ء) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو پنسلوانیا میں منہ کی کھانا پڑ گئی، جج نے ٹرمپ کے الیکشن میں بڑے پیمانے پر دھاندلی کے دعوے کو مسترد کر دیا۔غیرملکی خبررسا ں ادارے کے مطابق جج نے اپنے فیصلے میں بتایا کہ ٹرمپ کی ٹیم نے ریاست پینسلوینیا میں ڈاک کے ذریعے کاسٹ ہونے والے ووٹوں کے بارے میں جو قانونی نکات پیش کیے ہیں وہ میرٹ کے بغیر اور افواہوں پر مبنی ہیں۔

(جاری ہے)

امریکی ریاست پنسلوانیا میں ڈیموکریٹک صدارتی امیدوار جو بائیڈن کو 80 ہزار ووٹوں کی برتری سے فاتح قرار دیا گیا تھا۔ری پبلکنز کی جانب سے ریاست مشی گن کے انتخابی نتائج روکنے کی بھی کوشش کی گئی جہاں جو بائیڈن ہی کامیاب قرار پائے ہیں۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے ہار نہ ماننے پر ری پبلکنز نے ڈیٹرائٹ میں ووٹوں کا آڈٹ کرنیکا مطالبہ کر دیا ہے۔خیال رہے کہ صدرارتی انتخابات میں جو بائیڈن کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے واضح طور پر برتری حاصل ہے۔انتخابی نتائج کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ نے 232 الیکٹورل ووٹ حاصل کیے ہیں جبکہ جو بائیڈن نے 306 الیکٹورل ووٹ لیے ہیں۔

مری شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments