نریندر مودی مقبوضہ کشمیر میں مظالم بند اور کرفیو اُٹھا لے بصورت دیگر 80لاکھ قبائلی عوام مودی کے مظالم کا جواب جہاد سے دینگے،پختون قبائلی عمائدین و مشران

منگل ستمبر 16:39

مظفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 17 ستمبر2019ء) پختون قبائلی عمائدین و مشران نے کہا ہے کہ نریندر مودی مقبوضہ کشمیر میں مظالم بند اور کرفیو اُٹھا لے بصورت دیگر 80لاکھ قبائلی عوام مودی کے مظالم کا جواب جہاد سے دینگے۔کشمیریوں سے کلمہ طیبہ اور انسانیت کا رشتہ ہے مودی 1947ء کی مار بھول گیا ہے اُسے یاد دلائیں گے۔ حکومت پاکستان اور پاک فوج کے حکم کا انتظار ہے کنٹرول لائن خونی لکیر ہے جسے نہیں مانتے کشمیری بھائیوں کی مدد1947ء میں بھی کی تھی اور آزادکشمیر ڈوگرہ سے جنگ کے زریعے حاصل کیا بقیہ کشمیر بھی ہم آزاد کروائینگے ان خیالات کااظہار سینٹرل پریس کلب مظفرآباد میں فاٹاسے تعلق رکھنے والے قبائلی مشران ،ایم این اے گل ظفر خان ،ایم پی اے اجمل خان آف باجوڑ،ابرارجان طوری ضلع کرم ،ملک جلال بنگش ،حامد حسین بنگش ،مہمند ایجنسی سے خان بہادر،ڈاکٹر خلیل آف باجوڑ،جنوبی وزیرستان سے ملک محمد یوسف ،اورکزئی ایجنسی سے ملک زبیر اور ڈسٹرکٹ کرم سے حیدر خان کے علاوہ نوجوان قبائلی سرکار سردار نوابزادہ وہاب آف جنوبی وزیرستان ٹانک کے علاوہ ممبر اسمبلی آزادکشمیر عبدالماجد خان اور ضلع باغ سے وقاص نسیم ودیگر نے پریس کانفرنس میں کہا کہ قبائلی عوام کشمیری بھائیوں کیساتھ مظالم پر سخت رنجیدہ ہیں نریندر مودی میں اگر زرہ برابر انسانیت و غیرت ہوتی تو وہ ننھے معصوم بچوں پر تشدد نہ کرتا ہسپتال موجود ہیں مگر علاج کی اجازت نہیں بازار ہیں مگر کاروبار بند ہے کھیل کے میدان ہیں مگر کھیل کی اجازت نہیں یہ کیسی جمہوریت ہے اقوام متحدہ کوپولیو کے قطرے نہ پلانے پر تشویش ہے اور بچوں سے ہمدردی کرتا ہے اور چائلڈ لیبر خاتمے کیلئے بھی تڑپتا ہے مگر اُسی اقوام متحدہ کا کردار یہ ہے کہ مقبوضہ کشمیر کے مظالم پرمکمل طور پر خاموش ہے۔

(جاری ہے)

حکومت پاکستان اجازت دے ہم پاک فوج کے شانہ بشانہ کردار ادا کرینگے اور جہاد کے زریعے کشمیر کو آزادکرینگے جسطرح ہم نے روس کی جارحیت کو روکا اور اُسے ٹکرے ٹکرے کر کے رکھا بھارت کا حشر بھی اُس سے بدتر کرینگے اُنہوں نے کہا کہ ہم 1000قبائلی مظفرآباد کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے آئے ہیں اگلی منزل ضلع نیلم ہے اس بار قبائلی ہاتھوں میں پاکستان اور آزادکشمیر کے پرچم لیکر آئے ہیں مگر اگلی بار ہم اسلحہ سمیت آئینگے اور کنٹرول لائن عبور کر کے کشمیر آزاد کرینگے ۔

اس موقع پر ممبر قانون ساز اسمبلی عبدالماجد خان نے کہا کہ خان عبدالقیوم خان کی نسل سے ہوں جنہوں نے 1947ء میں قبائلی مجاہدین کو بلایا تھا آج بھی ہم ان سے وہی توقع رکھتے ہیں پریس کانفرنس میں قبائلی مشران نے وزیراعظم عمران خان کو بہادر وزیراعظم قرار دیتے ہوئے حکومت اور پاک فوج پر مکمل اعتماد کا اظہار کیا پریس کانفرنس کے بعد سینٹرل پریس کلب تادومیل پل تک قبائلی عمائدین و مشران نے 1000قبائلی عوام اور مظفرآباد میں موجود سینکڑوں پختونوں اور سول سوسائٹی کے ہمراہ کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کی ریلی نکالی۔

مظفر آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments