پاکپتن،پولیو کا خاتمہ عوامی تعاون سے ہی ممکن ہے ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو ماہم آصف

ہفتہ 18 ستمبر 2021 23:39

پاکپتن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 18 ستمبر2021ء) پولیو کا خاتمہ عوامی تعاون سے ہی ممکن ہے ، پولیو کے خاتمے کیلئے تمام طبقات کے لوگ مشترکہ کاوشیں کریں ، والدین اپنے بچوں کو عمر بھر کی معذوری سے بچانے کیلئے پولیو ویکسین کے قطرے ضرور پلوائیں ، والدین پولیو کے خاتمے کیلئے سنجیدہ طرز عمل اختیار کریں ،تمام متعلقہ ادارے قومی مشنری جذبے کے تحت انتھک محنت کریں ،ان خیالات کا اظہار ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو ماہم آصف نے ڈی ایچ کیو ہسپتال میں پانچ سال سے کم عمر بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے پلا کر انسداد پولیو مہم کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، تقریب میں سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر محمد احمد شہزاد ، ڈی او ہیلتھ ریاض احمد ، ایم ایس ڈاکٹر نا صر الملک ، ڈاکٹرامان اللہ سمیت محکمہ صحت کے دیگر افسران بھی موجود تھے ، سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر محمد احمد شہزاد نے کہا کہ انسداد پولیو مہم کے سلسلہ میں بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے پلا نے کیلئے پولیو ٹیموں کی ٹریننگ بھی کروائی گئی ہے ، حکومت کی طرف سی353870 بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے پلانے کا ہدف مقر ر کیا گیا ہے اور اس سلسلہ میںکل1213 ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں ، جن میں سے موبائل ٹیمیں1087 ، فکسڈ اڈا جات 85 اور ٹرانز ٹ پوائنٹس کی85 ٹیمیں شامل ہیں جو گھر گھر جاکر پانچ سال تک کی عمر کے بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے پلا ئیں گی ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو ماہم آصف نے کہا کہ تمام متعلقہ محکمے اہداف کے حصول کو ہر صورت ممکن بنائیں ، مائیکرو پلان پر عمل درآمد کریں ، پولیو ویکسین کے قطرے پلانے کیلئے شعور آگاہی مہم بھی چلائیں ، تمام ادارے حکومتی گائیڈ لائن پر سو فیصد عمل درآمد کو یقینی بنائیں ۔

متعلقہ عنوان :

پاکپتن شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments