ٴ وزیر اعلی محمود خان صوبے کے بااختیار وزیراعلیٰ اور تمام تر فیصلے خود کرتے ہیں، شوکت یوسفزئی

- محمود خان کی پرفارمنس باقی تینوں صوبوں کے وزراء اعلیٰ کے مقابلے میں بہتر ہے ان کی قیادت میں صوبہ ترقی کی راہ پر گامزن ہوا محمودخان محنتی، کم گو اور ایماندار آدمی ہیں صوبے کی ترقی کے لیے سخت فیصلے بھی کرتے ہیں ،صوبائی وزیر اطلاعات

جمعہ اپریل 00:02

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 25 اپریل2019ء) خیبر پختونخوا کے وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ وزیر اعلی محمود خان صوبے کے بااختیار وزیراعلیٰ ہیںاور تمام تر فیصلے وزیراعلی محمود خان خود کرتے ہیں محمود خان کی پرفارمنس باقی تینوں صوبوں کے وزراء اعلیٰ کے مقابلے میں بہتر ہے ان کی قیادت میں صوبہ ترقی کی راہ پر گامزن ہوا۔

محمودخان محنتی، کم گو اور ایماندار آدمی ہیں صوبے کی ترقی کے لیے سخت فیصلے بھی کرتے ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے وزیر اعلی محمود خان کے خلاف میڈیا میں غلط پروپیگنڈے کی تردید کرتے ہوئے کیا۔ شوکت یوسفزئی نے کہا کہ وزیر اعلیٰ حالات و واقعات سمجھنے پر عبور رکھتے ہیں اور فاٹا کے انضمام جیسا مشکل معاملہ ان کی سیاسی بصیرت سے کافی خوش اسلوبی سے حل ہواانہوں نے مالی مشکلات کے باوجود صوبے کو ابھی تک بہترین انداز میں چلایا اور وزیراعظم عمران خان بھی محمود خان پر اعتماد کر رہے ہیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی کے اختیارات میں کوئی دخل اندازی نہیں کرسکتا اور وہ پورے صوبے پر فوکس کر رہے ہیں محمود خان پہلے وزیر اعلیٰ ہیں جو حالات پر نظر رکھنے کے لیے تواتر کے ساتھ اضلاع کے دورے کر رہا ہے۔ اختلافات کی باتوں کی تردید کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزیراعلی کی ذات پر آج تک کوئی بھی انگلی نہیں اٹھا سکا اورحکومت کے اندر اختلافات کی باتوں میں کوئی حقیقت نہیں وزیراعلی تمام وزراء کی کارکردگی کو خود مانیٹر کر رہے ہیں۔

کابینہ میں ردوبدل کے حوالے سے صوبائی وزیر نے کہا کہ یہ کوئی نا ممکن بات نہیں۔فارمولہ سمپل ہے جو وزیر کارکردگی دکھائے گا وہ کابینہ میں رہے گااورجس وزیر کی پرفارمنس نہیں ہوگی وہ گھر جائے گا۔ آٹھ سے دس دن میں صوبائی کابینہ میں ردوبدل ہوسکتا ہے۔۔

پشاور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments