ملاکنڈ ڈویژن میں صحت کارڈ کے اجرا کے ایک ماہ کے دوران ہسپتالوں میں داخلے کی شرح دگنی

بدھ دسمبر 23:43

پشاور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 02 دسمبر2020ء) خیبرپختونخوا حکومت نے ہیلتھ انشورنس پروگرام شروع کیا ہے جس کے تحت صوبے کی تمام آبادی کومفت علاج معالجے کی سہولیات مہیا ہوں گی۔ پروگرام کا آغاز یکم نومبر سے ملاکنڈ ڈویژن کے 6 اضلاع سے ہوا ہے جس کے بعد ہسپتالوں میں داخلے کی مجموعی شرح میں 100 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

(جاری ہے)

صوبائی وزیر صحت و خزانہ تیمور سلیم خان جھگڑا کا اس حوالے سے اعداد و شمار شیئر کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ملاکنڈ ڈویژن کے 6 اضلاع جن میں چترال، ملاکنڈ، اپر و لوئر دیر اور سوات میں ماہ نومبر کے دوران مجموعی طور پر 4950 مریض ہسپتالوں میں ایڈمٹ ہوئے جبکہ ماہ اکتوبر میں یہ تعداد 2502 تھی۔

چترال کے ہسپتالوں میں داخلے کی شرح ایک ماہ میں 266 فیصداضافہ ہوا۔ اسی طرح لوئر دیر میں 90 فیصد اور ملاکنڈ میں مریضوں کے داخلے کی شرح میں 109 فیصد اضافہ ہوا۔ملاکنڈ ڈویژن کے صدر مقام سوات میں یہ شرح 75 فیصد بڑھی جبکہ اپر دیر میں 82 فیصد اضافہ ہوا۔ صوبائی وزیر صحت و خزانہ تیمور جھگڑا کاکہناتھاکہ نئے سال کے ابتدائی ماہ سے پورے صوبے کی آبادی مفت صحت سہولیات سے مستفید ہو گی۔

متعلقہ عنوان :

پشاور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments