پشاور،موجودہ حکومت میں سچ سننے اور تنقید برداشت کرنے کی ہمت نہیں، اسفندیار ولی خان

ہفتہ 23 اکتوبر 2021 23:12

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 23 اکتوبر2021ء) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت میں سچ سننیاور تنقید برداشت کرنے کی ہمت نہیں، نہ یہ سچ بول سکتے ہیں اور نہ سچ سن سکتے ہیں۔جتنی تنقید عوامی نیشنل پارٹی پر ہوئی ہے شاید ہی کسی پر ہوئی ہو،لیکن ہم آج بھی آزاد صحافت کے ساتھ کھڑے ہیں اور ہمیشہ کھڑے رہیں گے ۔

نامور صحافی عاصمہ شیرازی کو ہراساں کرنے کے حالیہ کیمپین اور پروپیگنڈے کی مذمت کرتے ہوئے اے این پی سربراہ اسفندیار ولی خان نے کہا کہ حکومت کو اپنے اندار برداشت کا مادہ پیدا کرنا ہوگا اور تنقید سے سیکھنا ہوگا ۔ موجودہ حکومت نیپہلیان صحافیوں اور صحافت سے وابستہ افراد کو بے روزگار کیاجو سچ بولتے تھے اور حکومت کی عوام دشمن پالیسیوں پر تنقیدکرتے تھے، جب اس سے بھی کام نہ بنا تو آج صحافیوں کو چھپ کرانے کے لئے ان کی کردارکشی اور تضحیک کی جارہی ہے۔

(جاری ہے)

بدقسمتی اس سے بڑی اور کیا ہوگی کہ موجودہ حکومت میں حکومتی اراکین، وزرا اور مشیر پریس کانفرنسز میں صحافیوں پر براہ راست حملے کررہے ہیں۔ حکومت صحافیوں کے خلاف کیمپین چلانے اور انکی تضحیک کرنے کی بجائے صحافیوں پر حملوں میں ملوث افراد کو قانون کے کٹہرے میں لائے۔ انہوں نے کہا کہ صحافیوں کو سچ بولنے سے روکنے کیلئے ان کی تضحیک کرنا اے این پی کبھی برداشت نہیں کرے گی۔ اے این پی میڈیا کی آزادی اور صحافت پر قدغنوں کے خلاف آواز اٹھاتی رہے گی۔ اے این پی آزاد صحافت کے ساتھ ساتھ عاصمہ شیرازی اور دیگر تمام صحافیوں کے شانہ بشانہ کھڑی رہے گی اور ہمیشہ سچ اور حق کا ساتھ دے گی۔

متعلقہ عنوان :

پشاور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments