قومی کرکٹ ٹیم کی خراب کارکردگی پر خیبرپختوا حکومت کا ردعمل

جس بورڈ کا سربراہ محسن نقوی ہو اس سے یہی توقع کی جاسکتی ہے، چیئرمین کا عہدہ سازشی ٹولے نے مینڈیٹ چوری کے انعام میں دیا تھا، نااہل ٹولے نے کرکٹ کے شائقین کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی ہے۔ مشیر اطلاعات کا بیان

Sajid Ali ساجد علی اتوار 16 جون 2024 19:55

قومی کرکٹ ٹیم کی خراب کارکردگی پر خیبرپختوا حکومت کا ردعمل
پشاور ( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 جون 2024ء ) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے مشیر برائے اطلاعات و تعلقات عامہ بیرسٹر ڈاکٹر سیف نے قومی کرکٹ ٹیم کی خراب کارکردگی پر رد عمل میں کہا ہے کہ جس بورڈ کا سربراہ محسن نقوی ہو اس سے یہی توقع کی جاسکتی ہے، محسن نقوی کو چیئرمین کا عہدہ سازشی ٹولے نے مینڈیٹ چوری کے انعام میں دیا تھا، نااہل ٹولے نے کرکٹ کے شائقین کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی ہے، محسن نقوی نے ٹیم کی بڑی سرجری کا شوشہ چھوڑا ہے اور یہ سرجری خود محسن نقوی، شریف فیملی اور پوری سازشی ٹولے کی ہونا چاہئیے۔

(جاری ہے)

اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ مینڈیٹ چور وزیراعظم اور مریم نواز نے ملک کے تمام اداروں کو تباہی کے دہانے پر پہنچایا ہے اس لئے ٹیم کی خراب کارکردگی کے ذمہ دار براہ راست مینڈیٹ چور وزیراعظم اور محسن نقوی ہیں، محسن نقوی کو فوری استعفیٰ دینا چاہیے۔ بیرسٹر سیف نے کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کا چیئرمین ایک پروفیشنل ذمہ دار بندہ ہونا چاہئیے محسن نقوی کو تو پی ٹی آئی کے خلاف کریک ڈائون سے ہی وقت نہیں ملتا، نااہل اور کرپٹ حکمران کھیل کے شعبے میں بھی عہدوں کی بندر بانٹ کرتے ہیں، کھیل کے میدانوں کو سیاست سے پاک کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔

پشاور میں شائع ہونے والی مزید خبریں