صوبے میں یونیورسٹیوں کی تعداد میں اضافہ اور ان میں طلباء کی بڑی تعداد میں انرولمنٹ ایک بہت بڑی پیشرفت ہے،

یونیورسٹیوں کی ترقی کے لئے ہائر ایجوکیشن کمیشن کے ساتھ مل کر کام کریں گے، وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کی چیئرمین ہائیر ایجوکیشں کمیشن ڈاکٹر طارق سے بات چیت

جمعہ نومبر 23:15

صوبے میں یونیورسٹیوں کی تعداد میں اضافہ اور ان میں طلباء کی بڑی تعداد ..
کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2018ء) وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان سے چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر طارق بنوری نے جمعہ کے روز یہاں ملاقات کی جس کے دوران بلوچستان کی یونیورسٹیوں اور دیگر اعلیٰ تعلیمی اداروں کے معیار اور سہولتوں میں اضافہ کے ساتھ ساتھ ترقیاتی منصوبوں میں صوبائی حکومت اور یونیورسٹیوں کے مابین تعاون کے فروغ سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

وزیراعلیٰ کے معاونین خصوصی کیپٹن ریٹائرڈ عبدالخالق اچکزئی، حسنین ہاشمی، رامین محمد حسنی اور سیکریٹری کالجز عبدالصبور کاکڑ بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ گذشتہ چند برسوں میں صوبے میں یونیورسٹیوں کی تعداد میں اضافہ اور ان میں طلباء کی بڑی تعداد میں انرولمنٹ ایک بہت بڑی پیشرفت ہے، ہم اپنے اداروں کو مضبوط بناکر ان کی استعداد کار میں اضافہ کرنا چاہتے ہیں تاکہ خود انحصاری کا حصول ممکن ہوسکے، وزیراعلیٰ نے کہاکہ تعلیم ہمارا مشترکہ ایجنڈا ہونا چاہئے اور یونیورسٹیوں میں تحقیق و تخلیق کے عمل کو فروغ ملنا چاہئے، وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہم اپنی یونیورسٹیوں کی ترقی کے لئے ہائر ایجوکیشن کمیشن کے ساتھ مل کر کام کریں گے اور ہمیں امید ہے کہ ایچ ای سی ہماری یونیورسٹیوں کے معیار کو بلند کرنے ، ہمارے باصلاحیت اور ذہین طلباء کی پی ایچ ڈی پروگرام میں تعداد میں اضافے سمیت سہولتوں کی فراہمی میں تعاون کرے گا۔

(جاری ہے)

وزیراعلیٰ نے کہا کہ انہوں نے گذشتہ روز بیوٹمز کے دورے کے دوران فیکلیٹی اور طلباء سے ملاقات کی فیکلیٹی سے ملاقات کے دوران ترقیاتی عمل میں بیوٹمز کے اشتراک اور تعاون پر بھی بات چیت ہوئی، انہوں نے کہا کہ پانی، توانائی، فوڈ سیکیورٹی سمیت دیگر شعبوں میں بیوٹمز کی فیکلیٹی کے تکنیکی تعاون کا خیرمقدم کیا جائے گا، ہم ان شعبوں کی ترقی کے لئے ان کے تجربہ اور مہارت کا فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں اور اس حوالے سے دیگر یونیورسٹیوں کو بھی ساتھ لے کر چلا جائے گا۔

چیئرمین ایچ ای سی نے وزیراعلیٰ کے موقف کو سراہتے ہوئے یقین دلایا کہ بلوچستان کی یونیورسٹیوں کے معیار کی بہتری کے لئے ایچ ای سی بھرپور تعاون کرے گا۔ انہوں نے بتایا کہ ایچ ای سی کے تحت ٹیکنالوجی ڈیویلپمنٹ فنڈ اور ریجنل ڈیویلپمنٹ فنڈ قائم کئے جارہے ہیںجن کے ذریعہ یونیورسٹیوں کو گرانٹ فراہم کی جائے گی اور ان فنڈز میں بلوچستان کی یونیورسٹیوں کو بھی ترجیح دی جائے گی۔

انہوں نے یہ بھی بتایا کہ ایچ ای سی کے زیراہتما م کوئٹہ میں واٹر سینٹر قائم کیا جارہا ہے جس کے ذریعہ کوئٹہ سمیت صوبے کے دیگر علاقوں میں زیر زمین پانی کے ذخائر سے متعلق ریسرچ کرکے ان ذخائرمیں اضافے کے حوالے سے سفارشات مرتب کی جائیں گی۔ انہوں نے کہا کہ ایچ ای سی یونیورسٹیوں کو خودمختار بنانا چاہتی ہے تاکہ ان میں ہر قسم کی مداخلت ختم کرکے شفافیت لائی جائے، انہوں نے وزیراعلیٰ کو ایچ ای سی کے دیگر پروگراموں کی تفصیلات سے بھی آگاہ کیا۔

کوئٹہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments