پاکستان نے عام لوگوں کیلئے طورخم بارڈر کھول دیا

کابل میں پاکستانی سفارت خانے نےپاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے دورہ کابل کے موقع پر طورخم بارڈرکھولنے کا اعلان کیا، ذرائع

Danish Ahmad Ansari دانش احمد انصاری جمعہ 22 اکتوبر 2021 02:21

پاکستان نے عام لوگوں کیلئے طورخم بارڈر کھول دیا
طورخم (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - 22 اکتوبر2021ء) پاکستان نے عام لوگوں کیلئے طورخم بارڈر کھول دیا- کابل میں پاکستانی سفارت خانے نےپاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے دورہ کابل کے موقع پر طورخم بارڈرکھولنے کا اعلان کیا- تفصیلات کے مطابق طور خم بارڈر عام افراد کیلئے کھول نے کے حکومت پاکستان کے فیصلہ کا افغانستان میں عوامی سطح پر زبر دست خیر مقدم کیا گیا ہے۔

کابل میں پاکستانی سفارتی ذرائع کے مطابق پاکستان کا مینوئل اور آن لائن کارآمد ویزا رکھنے والے تمام افغان باشندے پاکستان کا سفر کر سکتے ہیں جبکہ کابینہ کےفیصلے کے تحت پاکستانی ویزا رکھنے والے افغان باشندوں کو پرمٹ کی ضرورت نہیں ہوگی۔ اس کے علاوہ پاکستان کے تمام سفارتی مشنز کو مطلع کیا گیا ہےکہ وہ کسی افغان شہری یا افغان شہریت رکھنے والے غیر ملکی فردکو مینوئل ویزا جاری نہ کریں جبکہ افغان باشندے پاکستان آن لائن ویزا سسٹم کے ذریعے ویزا حاصل کر سکتے ہیں۔

(جاری ہے)

واضح رہے کہ پاکستان نے افغانستان کوکاروباری ویزا لسٹ میں شامل کرلیا ہے جبکہ افغان باشندوں کے لیے ویزا فیس بھی معاف کردی ہے اور یہ سہولت 31 دسمبر 2021 تک کے لیے ہے۔ پاکستانی سفارتی ذرائع کے مطابق افغانستان میں حکومت کی تبدیلی کے بعد ناپسندیدہ عناصر اور غلط افراد کو روکنے کیلئےطورخم بارڈر پر پابندیاں لگائی گئی تھیں۔ طورخم بارڈر کھُلنےکی اطلاع پر افغان عوام نے خوشی کا اظہار کیا ہے۔

واضح رہے کہ پہلے صرف طلبہ ،مریضوں اور خصوصی اجازت پر افغان باشندوں کو بارڈر کراس کرنے کی اجازت تھی۔ ادھر افغان ذرائع کا کہنا ہےکہ افغانستان میں خراب معاشی حالات اور بے روزگاری کے سبب بہت بڑی تعداد میں افغان باشندے پاکستان جانا چاہتے ہیں۔ اس کے علاوہ بہت بڑی تعداد ان لوگوں کی بھی ہے جو انخلا پروگرام کے تحت امریکا اور یورپ منتقل ہونےکیلئے پاکستان آنا چاہتے ہیں۔ یاد رہے کہ کچھ روز قبل طالبان حکومت نے پاکستان سے طورخم بارڈر کھولنے کی درخواست کی تھی۔

کوئٹہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments