خزانہ اینڈ اکاؤنٹس ایسوسی ایشن بلوچستانک کی وکلا کے غیر اخلاقی روئیے کیخلاف قلم چھوڑ ہڑتال کی حمایت ،وکلا کو اسٹامپ جاری نہ کرنے کا اعلان

جمعرات نومبر 21:24

کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 26 نومبر2020ء) خزانہ اینڈ اکاؤنٹس ایسوسی ایشن بلوچستان کے صوبائی صدر رفیع کاکڑ، سیکرٹری جنرل غلام نبی شاہوانی، چیئرمین حاجی ارشد گجر اور سرپرست صغیر حسین شاہ نے اپنے ایک بیان میں وکلا کے غیر اخلاقی روئیے کے خلاف ڈی سی آفس، تحصیل آفس، رجسٹرار آفس اور بندوبست آفس میں جاری قلم چھوڑ ہڑتال کی پرزور حمایت کے ساتھ ساتھ وکلا کو اسٹامپ جاری نہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ چند وکلا نے اپنے ذاتی عزائم حاصل کرنے کے لئے اپنے مقدس پیشے کو ہتھیار بنالیا ہے اور جب انکے عزائم پورے نہیں ہوتے تومحکموں میں جا کر نا روا رویہ اختیار کرتے ہیں جو کہ معمول بن چکا ہے وکلا کا رویہ اب ناقابل برداشت ہو چکا ہے لہذا تمام محکموں کی یونین و ایسوسیشن مل بیٹھ کر اس پر جامع فیصلہ کریں۔

(جاری ہے)

بیان میں کہا گیاہے کہ وکلا کے غیر اخلاقی رویے کی داستانیں کسی سے ڈھکی چھپی نہیں لاھور میں ڈاکٹروں اور مریضوں پر حملہ، پنجاب میں سول ججوں پر حملہ اور پولیس پر حملے ہمیشہ اخباروں اور نیوز چینلز کی سرخی بنی رہی ہیں خزانہ آفسسز میں بھی وکلا کا غیر اخلاقی رویہ معمول بن چکا ہے لہذا ہم باقی محکموں کو بھی دعوت دیتے ہیں کہ وکلا گردی کے خلاف ریونیو عملے کے جاری احتجاج کی پرزور حمایت کرتے ہوئے اس کا حصہ بنیںانہوں نے مزید کہا کہ جب تک وکلا اپنی غلطی کا ازالہ نہیں کرتے خزانہ آفس وکلا کو اسٹامپ جاری نہیں کرے گا بلکہ اس احتجاج کو صوبائی سطح تک جانے کا بھی حق محفوظ رکھتے ہیں۔

کوئٹہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments