اُردو پوائنٹ پاکستان راولپنڈیراولپنڈی کی خبریںپنجاب بھر میں یکم جنوری 2019سے ناقص پیکجنگ میٹریل کے خلاف کریک ڈائون ..

پنجاب بھر میں یکم جنوری 2019سے ناقص پیکجنگ میٹریل کے خلاف کریک ڈائون شروع ہو گا

, ’فوڈ پیکجنگ /کانٹیکٹ میٹریل ریگولیشنز 2018‘‘ کے تحت سٹائرو فوم سے بنے پیکجنگ میٹریل پر پابندی عائد

راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 اگست2018ء)پنجاب بھر میں 31دسمبر کے بعد اشیائے خور و نوش صرف منظور شدہ پیکجنگ میٹیریل میں پیک کی جا سکیں گی ،خلاف ورزی پریونٹس سر بمہر اور بھاری جرمانے کرنے کا فیصلہ ۔ پنجاب فوڈ اتھارٹی نے پنجاب بھر میں اشیائے خور ونوش کی ناقص میٹیریل میں پیکنگ پر پابندی عائد کرتے ہوئے ہوٹلز ،فاسٹ فوڈز پوائنٹس اور اشیائے خور ونوش کے کاروبار سے منسلک افراد کو انتباہ کیا ہے کہ وہ صرف منظور شدہ پیکجنگ میٹیریل (پولی پروپلین ،پیپر ،ایلمونیم )یا دیگر استعمال کرنے کے پابند ہیں بصورت دیگر ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی ۔

پنجاب فوڈ اتھارٹی کے ذرائع نے اے پی پی کو بتایاکہ پی ایف اے نے ’’فوڈ پیکجنگ /کانٹیکٹ میٹریل ریگولیشنز 2018‘‘ کے تحت سٹائرو فوم سے بنے پیکجنگ میٹریل پر پابندی عائد کر دی ہے لہذا تمام ریسٹورنٹس ،فاسٹ فوڈ آئوٹ لیٹس و دیگر متعلقہ ادارے اشیائے خور و نوش کو سٹائرو فوم سے بنی پیکجنگ میں ہر گز فروخت نہ کریں ۔

(خبر جاری ہے)

پی ایف اے ذرائع نے سرکاری خبر رساں ادارے کو بتایاکہ ریسٹورنٹس ،فاسٹ فوڈ آئوٹ لیٹس و دیگر متعلقہ اداروں کو ہدایت کی ہے کہ اشیائے خور ونوش کی پیکنگ کے لیے صرف منظور شدہ پیکجنگ میٹیریل (پولی پروپلین ،پیپر ،ایلمونیم )یا دیگر استعمال کیا جائے ۔

پی ایف اے حکام نے بتایاکہ اس ضمن میں کاروبار مالکان کو 31دسمبر 2018کی حتمی رعائتی مدت فراہم کی گئی ہے تاھم رعائتی مدت کے خاتمے کے بعد ممنوعہ پیکجنگ میٹریل کے استعمال میں ملوث ہوٹلز ،فاسٹ فوڈز اور دیگر اداروں کے خلاف سخت ترین کارروائی کی جائے گی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

راولپنڈی شہر کی مزید خبریں