راولپنڈی میں انسداد پولیو مہم 22 اپریل سے جاری

پشاور واقعہ کے بعد کچھ والدین کی طرف سے شکوک و شبہات کا اظہار ،بعض نے اپنے بچوں کو پولیو کے قطرے پلانے سے انکار بھی کیا ہے، ڈاکٹر محمد ارشد خان 1 والدین کے شکوک و شبہات کو دور اور ا نکا ری والدین کو قائل کرنے کیلئے جامع حکمت عملی مرتب کر لی گئی ہے،چیف ایگزیکٹو افسر ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی راولپنڈی

جمعرات اپریل 23:49

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 25 اپریل2019ء) چیف ایگزیکٹو افسر ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی راولپنڈی ڈاکٹر محمد ارشد خان نے کہا ہے کہ راولپنڈی میں انسداد پولیو مہم 22 اپریل سے جاری ہے اور پشاور کے واقعہ کے بعد کچھ والدین کی طرف سے پولیو قطروں کے حوالے سے شکوک و شبہات کا اظہار کیا گیا ہے ․ اور بعض نے اپنے بچوں کو پولیو کے قطرے پلانے سے انکار بھی کیا ہے انہو ںنے کہا کہ والدین کے شکوک و شبہات کو دور کرنے اور ا نکا ر کرنے والے والدین کو قائل کرنے کے لئے جامع حکمت عملی مرتب کر لی گئی ہے جس کے مثبت نتائج حاصل ہو رہے ہیںپولیو مہم کے بارے میں تفصیلات بتاتے ہوئے ڈاکٹر محمد ارشد خان نے کہا کہ قطرے پلانے سے انکار کرنے والے والدین سے ضلعی انتظامیہ افسران اور اسسٹنٹ کمشنر ز ذاتی طور پر ملاقات کرتے ہیں اور انہیں قائل کیا جاتا ہے انہوں نے کہا کہ انکار کرنے والے والدین میں سے کئی اگلے دن اپنے بچوں کو پولیو سے بچائو کے قطرے پلانے پر راضی ہو جاتے ہیں انہوں نے کہا کہ راولپنڈی میں جاری انسداد پولیو مہم ٹارگٹ ہر صورت حاصل کیا جائے گا اور تمام فیلڈ سٹاف پوری مستعدی اور قومی خدمت کے جذبے سے سرشار ہو کر کام کر رہا ہے ․تاکہ اس مہم کو کامیاب بنایا جا سکے انہو ںنے کہا کہ اس مہم کا مقصد اپنے مستقبل کو محفوظ بنانا ہے اور جو لو گ اس میں رکاوٹ کا سبب بن رہے ہیں انہیں پولیو مہم کی افادیت کے بارے میں بتایا جا رہا ہے ۔

متعلقہ عنوان :

راولپنڈی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments