مری سانحہ ،وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی ہدایت پر قائم 5 رکنی انکوائری کمیٹی نے تحقیقات مکمل کرلیں

تحقیقاتی کمیٹی نے فائنڈنگز کو ڈرافٹ کی شکل دیدی، (آج) وزیر اعلیٰ پنجاب کو اپنی رپورٹ پیش کرے گی

اتوار 16 جنوری 2022 19:50

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 جنوری2022ء) ملکہ کوہسار مری میں برفانی طوفان میں 23 افراد کی اموات کا معاملہ ،وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی ہدایت پر قائم 5 رکنی انکوائری کمیٹی نے تحقیقات مکمل کرلیں،تحقیقاتی کمیٹی نے فائنڈنگز کو ڈرافٹ کی شکل دیدی، تحقیقاتی کمیٹی (آج)پیر کو وزیر اعلی پنجاب کو اپنی رپورٹ پیش کرے گی ،کمیٹی نے مری میں زندہ بچ جانے والوں کے بیانات اور افسران کے بیانات کا جائزہ لیا ۔

(جاری ہے)

ذرائع کے مطابق انتظامی محکموں کے 30 سے زائد افسران کے بیانات قلمبند کیئے گئے، سیاحوں نے 7 اور 8 جنوری کی رات کو خوفناک تجربہ قرار دیا۔ ذرائع کے مطابق رپورٹ میں کہاگیاکہ انتظامیہ کی غفلت سے سانحہ پیش آیا ،تین دن بعد مری جانے والے راستے بند کردینے چاہیے تھے ۔ رپورٹ کے مطابق مری جانے والے راستے پانچ دن برفباری ہونے اور دو دن تاخیر سے بند کیئے گئے، برف ہٹانے والی مشینری ایک جگہ کھڑی تھی اور عملہ غائب تھا، محکمہ موسمیات کی وارننگ کو بھی مسلسل نظر اندازہ کیا گیا۔

راولپنڈی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments