ترقیاتی منصوبوں میں ناقص میٹریل استعمال کرنے کی اجازت نہیں دینگے،شوکت یوسفزئی

ماضی میں سیاست کرنے والوں نے یہاں پسماندگی کے سوا کچھ نہیںکیا،سیلاب متاثرین کیساتھ ہیں مشکل کی اس گھڑی میں ان کی معائونت کرینگے،صوبائی وزیرثقافت

ہفتہ ستمبر 23:19

الپوری(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 26 ستمبر2020ء) شانگلہ سے رکن صوبائی اسمبلی و صوبائی وزیر محنت وثقافت خیبرپختونخواہ شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ تر قیاتی منصوبوں میں ناقص میٹریل استعمال کرنے کی اجازت نہیں دینگے،منصوبوں کی بروقت تکمیل ہونی چاہیئے ناقص میٹریل استعمال کرنے والوں سے سختی سے نپٹا جائے گا۔ ماضی میں سیاست کرنے والوں نے یہاں پسماندگی کے سوا کچھ نہیںکیا ۔

ہمارے سیاست کا مقصد عوام کو ریلیف دینا اور شانگلہ کی تقدیر بدلنا ہے۔سیلاب متاثرین کیساتھ ہیں مشکل کی اس گھڑی میں ان کی معائونت کرینگے۔بنیادی تعلیم کی فراہمی تحریک انصاف حکومت کی اولین ترجیح ہے ،شانگلہ میں فروغ تعلیم کیلئے تمام تر وسائل برئوکار لائے جائینگے۔شانگلہ میں قدرتی آفات میں متاثرہ سکولوں کی تعمیر کیلئے کام کیا جس میں اکثر سکول مکمل ہوچکیںہیں۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انھوں نے ہفتے کے روز دورہ شانگلہ کے موقعے پر مختلف شمولیتی پروگراموں اور ہائی اسکول دولت کلے میں سکول کے افتتاح کے موقعے پر کہی۔شوکت یوسفزئی نے زیر تعمیر ہائیر سیکنڈری سکول ڈھیرئی میں ناقص میٹریل کے استعمال پر دیواریں گراتے ہوئے متعلقہ ٹھیکیدار کے خلاف کاروئی کا حکم دیا ۔پیرآباد جرگے سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے یقین دہانی دلاتے ہوئے کہا کہ پیرآباد سڑک پر گزشتہ دس سالوں سے سیاست ہورہی ہے اس حوالے سے آئندہ ہفتے چیئرمین حرا سے جرگے کی ملاقات کرائی جائے گی تاکہ عوام کا یہ درینہ مطالبہ حل ہوسکیں۔

ڈپٹی کمشنر آفس میں حالیہ سیلاب سے متاثرہ 54خاندانوں میں امدادی چیک تقسیم کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ حکومت متاثرین کیساتھ ہے اور انکی ہر ممکن مدد کی جائے گی ۔اس موقع پر صوبائی وزیر شوکت یوسفزئی، حاجی سدید الرحمان اور ضلعی صدر وقار خان ودیگر کا شمولیتی تقاریب میں پاکستان تحریک انصاف ورکرزاور علاقائی عوام کی جانب سے زبردست استقبال کیا گیا اس موقع پر صوبائی وزیر شوکت یوسفزئی نے ہائی اسکول دولت کلے میں پہلے طالبعلم کا داخلہ بھی کروایا بعد میں افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شانگلہ میں تعلیم کو فروغ دینا اولین ترجیح ہے - شانگلہ کے 88 سیلاب سے متاثرہ نان سٹے ٹی جی اسکولوں کو 55 کروڑ روپے جاری کیے گئے اوران اسکولوں کی تعمیرنوپر کام جاری ہے عنقریب دسمبر سے پہلے مکمل ہوجائیں گے - انھو ں نے کہا کہ اے ڈی پی کے تحت شانگلہ میں30 سکولوں پر بھی کام جاری ہے زیادہ تر اسکول مکمل ہوچکے ہے صوبائی وزیر نے سکول تک پہنچنے کیلئے 2 کلومیٹر روڈ کی بھی منظوری دی- شمولیتی تقاریب میں درجنوں خاندانوں نے دیگر جماعتوں سے مستعفی ہوکر تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا جس کوصوبائی وزیر شوکت یوسفزئی نے پارٹی ٹوپیاں پہنائی اور نئے شمولیت کرنے والوں کے گھروں پر پارٹی کا جھنڈا لہراتے ہوئے نئے شمولیت اختیار کرنے والے خاندانوں کو خوش آمدید کہا

شانگلہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments