بغیر ڈرگ سیل لائسنس کے جعلی ، ممنوعہ، زائد المعیاد اور ان رجسٹرڈادویات فروخت کرنے والوں کا سختی سے محاسبہ کیا جائےگا،ڈپٹی کمشنر سیالکوٹ

منگل 18 جنوری 2022 18:05

سیالکوٹ۔18جنوری  (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی - اے پی پی ۔18 جنوری2022ء) :ڈپٹی کمشنر سیالکوٹ طاہر فاروق نے کہا ہے کہ ڈرگ انسپکٹر روزانہ کی بنیاد پر میڈیکل اسٹورز کی انسپکشن کرینگے، بغیر ڈرگ سیل لائسنس کے جعلی ، ممنوعہ، زائد المعیاد اور ان رجسٹرڈادویات فروخت کرنے والوں کا سختی سے محاسبہ کریں ۔ تمام ڈرگ انسپکٹرز کی کارکردگی کا ہفتہ وار جائزہ لیا جائے اور انتظامی افسران مہیا کردہ ڈیٹا کی بنیاد پر کراس چیک کریں گے اور ضمن میں غفلت ، تساہل اور لاپرواہی برداشت نہیں کی جائے گی۔

ضلع سیالکوٹ میں کسی کو انسانی جانوں سے کھیلنے کی اجازت نہیں دی جائے گی اور جس ڈرگ انسپکٹرز کے علاقہ میں جعلی اور ممنوعہ ادویات کا گھنائونا کاروبار ہوا اس کے خلاف بھی محکمانہ کارروائی کی جائے گی اور اس سلسلہ میں کسی سے بھی رعایت نہیں بھرتی جائے گی ۔

(جاری ہے)

یہ ہدایات انہوں نے اپنی زیر صدارت ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ سیالکوٹ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جاری کیں ۔

اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل فاروق اکمل ، اسسٹنٹ کمشنر ہیومین ریسورس راحیل بیگ اراکین ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ سی ای او ہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر اسلم چودھری، سیکرٹری ڈی کیو سی بی حافظ محمد فیصل، میڈیسن ایکسپرٹ ڈاکٹر سعد، ڈرگ انسپکٹر سیالکوٹ نائیلہ رفیق، ڈرگ انسپکٹر پسروراشفاق احمد، ڈرگ انسپکٹر سمبڑیال حماد اشرف اورڈرگ انسپکٹر ڈسکہ شیخ اویس الیاس نے شرکت کی۔اجلاس میں ڈرگ انسپکٹرز کی جانب سے اپنی اپنی تحصیلوں میڈیکل اسٹورز اور میڈیسن ڈسٹری بیوٹر کی انسپکشن کے دوران بغیر ڈرگ سیل لائسنس، زائد المعیاد، ممنوعہ اور ان رجسٹرڈ ادویات فروخت اور ریکارڈ نہ رکھنے کی پاداش میں مجموعی طور پر 30 کیسز کی سماعت کی گئی۔

سیالکوٹ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments