کرونا وائرس سے محفوظ رہنے کے لیے ویکسینیشن کا عمل تمام سینٹروں پر جاری ہے،ڈپٹی کمشنر سکھر

بدھ جون 17:21

سکھر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 جون2021ء) ڈپٹی کمشنر سکھر جاوید احمد کہاہے کہ کرونا وائرس سے محفوظ رہنے کے لیے ویکسینیشن کا عمل تمام سینٹروں پر جاری ہے تمام سرکاری ملازمین اور افسران ویکسینیشن کرانے کے سلسلے میں کسی قسم کی کوتاہی نہ کریں بصورت دیگر کسی کے ساتھ رعایت نہیں برتی جائے گی سندھ حکومت کی جانب سے جاری کردہ حکم نامے میں واضح ہدایات دی گئیں ہیں کہ کرونا ویکسین ہر صورت میں کروائی جائے خلاف ورزی کرنے پر سخت کاروائی ہوسکتی ہے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے آفس کے کانفرنس روم میں کرونا وائرس سے بچائو ، ویکسین اور مجموعی صورتحال کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا ۔ اجلاس میں اے ڈی سی ون عدنان راشد، ایڈمنسٹریٹر علی رضا انصاری، ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ڈاکٹر جمیل احمد مہر، ایم ایس ڈاکٹر تسلیم اختر خمیسانی سمیت دیگر متعلقہ محکموں کے اعلیٰ افسران نے شرکت کی ۔

(جاری ہے)

ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر سکھر ڈاکٹر جمیل احمد مہر نے بتایا کہ ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفس کے زیر انتظام ضلع سکھر میں بچل شاہ، کندھرا، دادلو، روہڑی ،، غلام محمد مہر میڈیکل کالج ، پنوعاقل ، لیبر کالونی، انوار پراچا استال، ریلوے اسپتال سکھر میں ویکسی نیشن سینٹرز پر ویکسین کا عمل جاری ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سب سے پہلے ہیلتھ ورکرز کی ویکسین کی گئی جو کہ 80 فیصد مکمل ہوچکی ہے اور ویکسین کے بعد تمام ورکرز ، ڈاکٹر ز صحت مند اور خوش ہیں انہوں نے عوام کو مشورہ دیا کہ ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے مطابق کرونا سے بچائوکے لیے ویکسین انسانی صحت کے لیے فائدہ مند ہے جس سے جسمانی طور پر کوئی بھی نقصان نہیں ہوگا ۔

کرونا وائرس سے بچائو کی ویکسین کے بارے میں جو بھی پروپیگنڈہ وائرل ہورہا ہے اس میں کوئی صداقت نہیں ہے۔ ڈی ایچ او نے کہا کہ اب تک رپورٹ کے مطابق مجموعی طور پر 40 ہزار سے زائد افراد کو ویکسین لگائی گئی ہے جبکہ 5 ہزار ویکسین موجود ہے ۔ انہوں نے عوام کو اپیل کرتے ہوئے کہا کہ کرونا سے بچائو کی ویکسین لگوانے میں کوتاہی نہ کریں اور سینٹروں پر جاکر ویکسین ضرور کرائیں ۔ اس سلسلے میں غلام محمد مہر میڈیکل کالج سکھر کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر تسلیم اختر خمیسانی نے بتایا کہ جی ایم ایم سی اسپتال میں قائم کروان ویکسین سینٹر سے 15345 افراد کو ویکسین لگائی جاچکی ہے جبکہ ویکسین کا عمل جاری ہے۔

سکھر شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments