سجاول ، نہریں خشک ہونے کے باوجود پانی چوری کے مقدمے میں زمیندار گرفتار

جمعرات 20 جنوری 2022 00:52

سجاول(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 19 جنوری2022ء) ضلع سجاول میں نہریں خشک ہونے کے باوجود پانی چوری کے مقدمے میں ایک زمیندار گرفتارکرلیاگیاہے۔پولیس کا کہناہے کہ مڑھوبولاخان سے ایریگیشن ایکٹ کے تحت محمد رمضان رند کو گرفتارکیاگیاہے جس کے خلاف سجاول تھانہ پر مقدمہ 176/2021 دفعہ 430PPC r/w 61,62 ایریگیشن ایکٹ کے تحت درج ہے، واضع رہے کہ سجاول ضلع بھر میں اس وقت پانی کا شدید بحران ہے اور تمام نہریں خشک ہیں۔

(جاری ہے)

دیہی علاقوں میں فصلوں کا بھاری نقصان ہواہے جبکہ نہریں خشک ہونے سے شہری علاقوں میں پانی کے ذخائر ختم ہوچکے ہیں اور شہری شدید پریشانی کا شکارہیں، انتہائی آلودہ استعمال کرنے پر مجبورہیں۔سالانہ مرمتی کام کے لئے کوٹری سے تمام علاقے میں پانی بندہے، آبپاشی ذرائع کا کہناہے کہ پانی کی قلت مزید ایک ہفتہ تک جاری رہ سکتی ہے، ایسی کیفیت کے دوران سجاول میں پولیس نے مڑھوبولاخان سے پانی چوری کے مقدمے میں ایک کاشتکارکو گرفتارکرلیاہی

ٹھٹھہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments