پنجاب میں گونگی معذور لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا ، ملزم فرار

40 سالہ ملزم شاہد نے 17 سالہ گونگی معذور لڑکی سے مبینہ طور پر زیادتی کی ۔ پولیس

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین بدھ فروری 10:57

پنجاب میں گونگی معذور لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا ، ملزم ..
ٹوبہ ٹیک سنگھ (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 24 فروری 2021ء) : ٹوبہ ٹیک سنگھ میں ایک معذور اور گونگی لڑکی کو جنسی ہوس کا نشانہ بنا دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب کے ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ کے شہر کمالیہ کے نواحی گاوٗں میں رونما ہوا، جہاں ملزم نے 17 سالہ معذور کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔ پولیس نے اس حوالے سے بتایا کہ 40 سالہ ملزم شاہد نے 17 سالہ گونگی معذور لڑکی کو مبینہ طور پر جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا اور ملزم لڑکی کو تشویشناک حالت میں چھوڑ کر فرار ہوگیا۔

پولیس کے مطابق متاثرہ لڑکی کو انتہائی خراب حالت اسپتال منتقل کیا گیا جہاں اس کا طبی معائنہ اور علاج جاری ہے۔ پولیس کی جانب سے تاحال واقعہ کا مقدمہ درج نہیں کیا گیا ، جبکہ پولیس کا مؤقف ہے کہ تاحال اہل خانہ کی طرف سے کیس درج نہیں کروایا گیا، لڑکی کے گھر والوں سے درخواست ملتے ہی مقدمہ درج کرلیا جائے گا۔

(جاری ہے)

پولیس کا کہنا ہے کہ جیسے ہی متاثرہ لڑکی کے اہل خانہ سے مقدمے کے اندراج کی درخواست دیں گے ، ملزم کی تلاش اور گرفتاری کے لیے کوششیں شروع کر دی تھیں۔

خیال رہے کہ ملک بھر میں آئے روز زیادتی کے کیسز میں ہوشُربا اضافہ ہو رہا ہے جس نے شہریوں کو تشویش میں مبتلا کردیا ہے۔ خواتین ، نوجوان لڑکیوں اور کم سن بچیوں کو بھی درندہ صفت ملزمان اپنی جنسی ہوس کا نشانہ بناتے ہیں۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ بچوں سے زیادتی کے واقعات میں ہوشربا اضافے کے بعد دو فروری کو سینیٹ کمیٹی میں بچوں سے پھانسی کے ملزمان کو سر عام پھانسی دینے کا بل منظور کر لیا گیا تھا۔ بل پر بحث کے بعد اسے اکثریت کے ساتھ منظور کرلیا گیا تھا۔ سینیٹ کی قائمہ کمیٹی نے بچوں کے ساتھ زیادتی کے کیسز میں آئے روز ہونے والے اضافہ کو قابل تشویش قرار دیا تھا۔

متعلقہ عنوان :

ٹوبہ ٹیک سنگھ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments