Holi

ہولی

ہولی جب بھی آئے

پیار کی خوشیاں لائے

رنگوں کے کھیلوں میں

مستی سی چھا جائے

خوش ہیں دادی نانی

بچوں کی نادانی

پچکاری میں بھر کر

پھینک رہے ہیں پانی

رنگ رنگیلی ہولی

چھیل چھبیلی ہولی

بچے ہوں یا بوڑھے

سب کی سہیلی ہولی

پانی کے غبارے

رنگوں کے نظارے

برا نہ مانو بھیا

لگتے ہیں کیا پیارے

عادل اسیر دہلوی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(450) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Aadil Aseer Dehlvi, Holi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Social, Hope Urdu Poetry. Also there are 8 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Social, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Aadil Aseer Dehlvi.