Aankhon Pay Woh Zulff Aa Rahi Hai

آنکھوں پہ وہ زلف آ رہی ہے

آنکھوں پہ وہ زلف آ رہی ہے

کالی جادو جگا رہی ہے

زنجیر جو کھڑکھڑا رہی ہے

وحشت کیا غل مچا رہی ہے

لیلیٰ خاکہ اڑا رہی ہے

مجنوں کو ہوا بتا رہی ہے

زلفیں وہ پری ہلا رہی ہے

دیوانوں کی شامت آ رہی ہے

پامال خرام ہو چکے دفن

پسنے کو بس اب حنا رہی ہے

ہیں چال سے ان کی زندہ درگور

مردوں پہ قیامت آ رہی ہے

دل نے الفت سے زک اٹھائی

آنکھوں دیکھا رلا رہی ہے

گویا ہونے دے بے زبانی

کیوں میرا گلا دبا رہی ہے

آغاؔ صاحب گلی میں ان کی

اک حور تمہیں بلا رہی ہے

آغا اکبرآبادی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(562) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Aagha Akbarabadi, Aankhon Pay Woh Zulff Aa Rahi Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 42 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Aagha Akbarabadi.