Kisi Aur Ne To Bana Nahi Mra Aasmaa Mra Aasmaa

کسی اور نے تو بنا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

کسی اور نے تو بنا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

ترے آسماں سے جدا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

یہ زمین میری زمین ہے یہ جہان میرا جہان ہے

کسی دوسرے سے ملا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

کہیں دھوپ ہے کہیں چاندنی کہیں رنگ ہے کہیں روشنی

کہیں آنسوؤں سے دھلا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

اسے چھو سکوں یہ جنون ہے میری روح کو یہ سکون ہے

یہاں کب کسی کا ہوا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

گریں بجلیاں میری راہ پر کئی آندھیاں بھی چلیں مگر

کبھی بادلوں سا جھکا نہیں مرا آسماں مرا آسماں

آلوک شریواستو

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(714) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of AALOK SHRIVASTAV, Kisi Aur Ne To Bana Nahi Mra Aasmaa Mra Aasmaa in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 12 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of AALOK SHRIVASTAV.