Dil Main Ju Baat Hai Batate Nahi

دل میں جو بات ہے بتاتے نہیں

دل میں جو بات ہے بتاتے نہیں

دور تک ہم کہیں بھی جاتے نہیں

عکس کچھ دیر تک نہیں رکتے

بوجھ یہ آئنے اٹھاتے نہیں

یہ نصیحت بھی لوگ کرنے لگے

اس طرح مفت دل گنواتے نہیں

دور بستی پہ ہے دھواں کب سے

کیا جلا ہے جسے بجھاتے نہیں

چھوڑ دیتے ہیں اک شرر بے نام

آگ لگ جاتی ہے لگاتے نہیں

بھول جانا بھی اب نہیں آساں

ورنہ یہ خفتیں اٹھاتے نہیں

آپ اپنے میں جلتے بجھتے ہیں

یہ تماشا کہیں دکھاتے نہیں

عبدالحمید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1534) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Abdul Hamid, Dil Main Ju Baat Hai Batate Nahi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 12 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Abdul Hamid.