Dawam E Wasal Ka Khawab

دوام وصل کا خواب

پکی گندم کے خوشوں میں

امڈتے دن کے ڈیروں میں

اندھیرے کی گھنی شاخوں

پرندوں کے بسیروں میں

تھکے بادل سے گرتے نام کے اندر

اترتی شام کے اندر

دوام وصل کا اک خواب ہے

جو سانس لیتا ہے

مہکتی سر زمینوں میں

مکانوں میں ، مکینوں میں

ترے میرے علاقوں میں

ہمارے عہد ناموں میں

لرزتے بادبانوں میں

کہیں دوری کے گیتوں میں

کہیں قربت کی تانوں میں

ازل سے تا ابد پھیلی ہوئی

اس چادر افلاک کے اندر

رداۓ خاک کے اندر

ہماری نیند کی گلیوں میں

اپنی دھن بجاتا ہے

مکان عافیت کے بند دروازے گراتا ہے

ابراراحمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(436) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Abrar Ahmad, Dawam E Wasal Ka Khawab in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 93 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Abrar Ahmad.