Har Rooz

ہر روز

ہر روز کوئی قلم ٹوٹ جاتا ہے

کوئی آنکھ پتھرا جاتی ہے

کوئی روزن بجھ جاتا ہے

کوئی دہلیز اکھڑ جاتی ہے

کوئی سسکی جاگ اٹھتی ہے

کوئی ہاتھ ٹھنڈا ہو جاتا ہے

کوئی دیوار گر جاتی ہے

اور کوئی راستہ بن جاتا ہے

ہر روز کہیں کوئی چھت بیٹھ جاتی ہے

کوئی درخت کٹ جاتا ہے

کوئی خواب بکھر جاتا ہے

کوئی آہٹ رخصت ہو جاتی ہے

اور ایک آواز ---- اپنی آمد کا

اعلان کر دیتی ہے

کوئی جنگل اگ آتا ہے

اور ایک زمانہ -- معدوم ہو جاتا ہے

ہر روز کوئی نیند ٹوٹ جاتی ہے

کوئی آنکھ لگ جاتی ہے

کوئی دل بیٹھ جاتا ہے

اور کوئی زخم بھر جاتا ہے

ایک قصہ ادھورا رہ جاتا ہے

ہر قصے کی طرح

کوئی گیت سو جاتا ہے

کوئی تان الجھ جاتی ہے

کوئی سانس پھول جاتی ہے

اور خاموشی چھا جانے سے پہلے

کوئی دھن چھڑ جاتی ہے

انگلیاں چلتی رہتی ہیں

تار ٹوٹتے رہتے ہیں !

ہر روز کوئی بارش تھم جاتی ہے

کوئی زمین سوکھ جاتی ہے

کوئی چولہا سرد ہو جاتا ہے

کوئی بستی اجڑ جاتی ہے

------- کسی تعمیر کے نواح میں

کوئی خوشبو سو جاتی ہے

ایک دریا اپنا رخ تبدیل کر لیتا ہے

اور کناروں پر ایک آگ جل اٹھتی ہے

ہر روز کوئی پھول کھل اٹھتا ہے

کوئی ہوا چل پڑتی ہے

کوئی مٹی اڑ جاتی ہے

اڑ جاتی ہے اور بکھر جاتی ہے

ہونے کی لذت سے سرشار چہروں پر

کوئی کھڑکی بند ہو جاتی ہے

اور کوئی دروازہ کھل جاتا ہے

کھلا رہتا ہے دیر تک

کوئی پہیہ رک جاتا ہے

کوئی سواری اتر جاتی ہے

کوئی پتہ ٹوٹ جاتا ہے

کوئی دھول بیٹھ جاتی ہے

اور ایک سفر تمام ہو جاتا ہے

شاخ جھول جاتی ہے

اور کوئی پرندہ اڑ جاتا ہے

ان دیکھی فضاوں کی جانب

اجنبی گھٹاؤں کی جانب

ہر روز میری آنکھ سے ، تمھارے لیے

ایک آنسو-- گر جاتا ہے

ہونٹوں سے ایک دعا اتر جاتی ہے

دل میں ایک دھاگہ ٹوٹ جاتا ہے

اور ایک دن --- گزر جاتا ہے

دنوں پر دن گرتے چلے جاتے ہیں

گھاس پر سوکھے پتوں کی طرح

مٹھی سے گرتی ریت کی طرح

گزرتے چلے جاتے ہیں

آنکھ سے گزرتے منظروں کی طرح

ہوا میں بہتے بادلوں کی طرح

اور ایک روز ------

موسم گدلا جائیں گے

چہرے ساکت ہو جائیں گے

شور تھم جائے گا

سارے دن

میرے اندر -- غروب ہو جائیں گے

اور آتے ہوئے روز میں --------

ٹوٹ ہوا قلم

ایک نام کا دھبا

اور کٹی ہوئی انگلیوں کے نشان رہ جائیں گے !

ابراراحمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(434) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Abrar Ahmad, Har Rooz in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 93 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Abrar Ahmad.