Tum Hanste Ho

تم ہنستے ہو

تم ہماری دنیا کو دیکھتے ہو

اور ہنستے ہو ...

تمھارے چہرے پر آسودگی ہے

اور سیرابی...

بہت دنوں بعد ایک اجلا دن نکلا ہے

اس دن کے عین وسط میں

تم .. سر کو پیچھے کی جانب پھینکتے ہو

اور ہنستے ہو

تم ہنسی سے .. کچھ زیادہ ہنستے ہو

سب تمہیں دیکھتے ہیں

پتے تالیاں بجاتے ہیں

بادل ٹوٹ ٹوٹ جاتا ہے

آدمی کو توفیق ملے

تو اسے ہنس لینا چاہیے

میرے دل میں جب روشنی اترتی ہے

تو میں بھی ہنستا ہوں

لیکن تمہیں اچھا نہیں لگتا

تمھارے چہرے پر ملامت

اور تاریکی چھا جاتی ہے

کیا میں ہنستا ہوا اچھا نہیں لگتا ؟

تم ہنستے ہوئے بہت اچھے لگتے ہو

میرا خیال ہے

دوسروں کی ساری ہنسی بھی

تمہیں ہنس لینی چاہیے

ابراراحمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(474) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Abrar Ahmad, Tum Hanste Ho in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 93 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Abrar Ahmad.