Tumhari Bazm Main Jiss Baat Ka Bhi Charcha Tha

تمہاری بزم میں جس بات کا بھی چرچا تھا

تمہاری بزم میں جس بات کا بھی چرچا تھا

مجھے یقین ہے اس میں نہ ذکر میرا تھا

نہ سرد آہیں نہ شکوے نہ ذکر درد فراق

ہمارے عشق کا انداز ہی نرالا تھا

کل آ گیا تھا سوا نیزے پر مرا سورج

میں جل رہا تھا مگر ہر طرف اندھیرا تھا

تھا چہرہ یخ زدہ جذبات کی حسیں تصویر

بدن کشش کا مرقع سراب آسا تھا

مجھے بھی فرصت نظارۂ جمال نہ تھی

اور اس کو پاس کسی اور کے بھی جانا تھا

ابرار عظمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1208) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Abrar Azmi, Tumhari Bazm Main Jiss Baat Ka Bhi Charcha Tha in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 9 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Abrar Azmi.