Apni Dushwari Bhi Ajab Dushwari Hai

اپنی دشواری بھی عجب دشواری ہے

اپنی دشواری بھی عجب دشواری ہے

اتنا کام نہیں جتنی تیاری ہے

بدل چکی ہے نفرت میں ، لیکن پھر بھی

جیسے تیسے تجھ سے محبت جاری ہے

وقت مرتب کرتا جاتا ہے تاریخ

اور ادھر ان کی نوٹنکی جاری ہے

زخم کو سہنا کس پر فرض ہے ، کیونکر ہے

اور جراہی کس کی ذمہ داری ہے

دل بھی پسیجنے کو تیار ہے اور اس پر

ان روتی آنکھوں کا وار بھی کاری ہے

حرف کہاں اور ذلت_مدح سرائی کہاں

لیکن ایک گروہ بڑا درباری ہے

سب حساس ہیں اپنی اپنی جگہ عدیل

اور سبھی کو شوق _دل آزاری ہے

عدیل شاکر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(831) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Adeel Shakir, Apni Dushwari Bhi Ajab Dushwari Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 49 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Adeel Shakir.