Kar Giya Dil Ko Ik Sarab Kharab

کر گیا دل کو اک سراب خراب

کر گیا دل کو اک سراب خراب

جیسے کرتا ہے اضطراب خراب

کیا تاسف ہو جب نکل آئے

عمر بھر کا کوئی حساب خراب

کچھ مرا باپ نرم خو تھا اور

کچھ مرے دوست بھی خراب خراب

ہم بڑھاتے ہیں ضبط _ خلق _ خدا

دے کے ہر بات کا جواب خراب

احتیاط احتیاط! خوش اندام !

کردیا کرتا ہے شباب خراب

ایک رونا تو یہ بھی ہے کہ ہوئی

کیا فضائے خیال و خواب خراب

سچ بتائیں تو اس قدر بھی نہیں

آپ کا ہم سے اجتناب خراب

وہ بھی کچھ جلد باز تھا شاکر

کچھ ہمارا بھی انتخاب خراب

عدیل شاکر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(411) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Adeel Shakir, Kar Giya Dil Ko Ik Sarab Kharab in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 49 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Adeel Shakir.