Mere Liye Sahil Ka Nazara Bhi Buhat Hai

میرے لیے ساحل کا نظارا بھی بہت ہے

میرے لیے ساحل کا نظارا بھی بہت ہے

گرداب میں تنکے کا سہارا بھی بہت ہے

دم ساز ملا کوئی نہ صحرائے جنوں میں

ڈھونڈا بھی بہت ہم نے پکارا بھی بہت ہے

اپنی روش لطف پہ کچھ وہ بھی مصر ہیں

کچھ تلخئ غم ہم کو گوارا بھی بہت ہے

انجام وفا دیکھ لیں کچھ اور بھی جی کے

سنتے ہیں خیال ان کو ہمارا بھی بہت ہے

کچھ راس بھی آتی نہیں افسرؔ کو مسرت

کچھ یہ کہ وہ حالات کا مارا بھی بہت ہے

افسر ماہ پوری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(726) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Afsar Mahpuri, Mere Liye Sahil Ka Nazara Bhi Buhat Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 9 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Afsar Mahpuri.