Zakham Ko Maat Kyon Nahi Karte

زخم کو مات کیوں نہیں کرتے

زخم کو مات کیوں نہیں کرتے

درد خیرات کیوں نہیں کرتے

راستے سائیں سائیں کرتے ہیں

راستے بات کیوں نہیں کرتے

پیار کرتے ہو پاگلوں کی طرح

حسب اوقات کیوں نہیں کرتے

الٹی سیدھی وضاحتیں کیا ہیں

سوچ کر بات کیوں نہیں کرتے

اب ملاقات کرنا آساں ہے

اب ملاقات کیوں نہیں کرتے

میں تمہیں جیتنے کی دھن میں ہوں

تم مجھے مات کیوں نہیں کرتے

احمد امیر پاشا

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(825) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmad Ameer Pasha, Zakham Ko Maat Kyon Nahi Karte in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 12 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmad Ameer Pasha.