Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye

کافر ہوں سر پھرا ہوں مجھے مار دیجئے

کافر ہوں سر پھرا ہوں مجھے مار دیجئے

میں سوچنے لگا ہوں مجھے مار دیجئے

ہے احترام حضرت انسان میرا دین

بے دین ہو گیا ہوں مجھے مار دیجئے

میں پوچھنے لگا ہوں سبب اپنے قتل کا

میں حد سے بڑھ گیا ہوں مجھے مار دیجئے

کرتا ہوں اہل جبہ و دستار سے سوال

گستاخ ہو گیا ہوں مجھے مار دیجئے

خوشبو سے میرا ربط ہے جگنو سے میرا کام

کتنا بھٹک گیا ہوں مجھے مار دیجئے

معلوم ہے مجھے کہ بڑا جرم ہے یہ کام

میں خواب دیکھتا ہوں مجھے مار دیجئے

زاہد یہ زہد و تقویٰ و پرہیز کی روش

میں خوب جانتا ہوں مجھے مار دیجئے

بے دین ہوں مگر ہیں زمانے میں جتنے دین

میں سب کو مانتا ہوں مجھے مار دیجئے

پھر اس کے بعد شہر میں ناچے گا ہو کا شور

میں آخری صدا ہوں مجھے مار دیجئے

میں ٹھیک سوچتا ہوں کوئی حد میرے لیے

میں صاف دیکھتا ہوں مجھے مار دیجئے

یہ ظلم ہے کہ ظلم کو کہتا ہوں صاف ظلم

کیا ظلم کر رہا ہوں مجھے مار دیجئے

زندہ رہا تو کرتا رہوں گا ہمیشہ پیار

میں صاف کہہ رہا ہوں مجھے مار دیجئے

جو زخم بانٹتے ہیں انہیں زیست پہ ہے حق

میں پھول بانٹتا ہوں مجھے مار دیجئے

بارود کا نہیں مرا مسلک درود ہے

میں خیر مانگتا ہوں مجھے مار دیجئے

احمد فرہاد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(234) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye by Ahmad Farhad - Read Ahmad Farhad's best Shayari Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye at UrduPoint. Here you can read the best poetry Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye of Ahmad Farhad. Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye is the most famous poetry by Ahmad Farhad. People love to read poetry by Ahmad Farhad, and Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye by Ahmad Farhad is best among the whole collection of poetry by Ahmad Farhad.

Ahmad Farhad is the most famous Urdu Poet. Therefore, people love to read Urdu Poetry of Ahmad Farhad. At UrduPoint, you can find the complete collection of Urdu Poetry of Ahmad Farhad. On this page, you can read Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye by Ahmad Farhad. Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye is the best poetry by Ahmad Farhad.

Read the Ahmad Farhad's best poetry Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye here at UrduPoint; you will surely like it. If we make a list of Ahmad Farhad's best Shayari, Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye of Ahmad Farhad will be at the top. Many people, who love the Urdu Shayari of Ahmad Farhad, regard it as the best poetry Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye of Ahmad Farhad.

We recommend you read the most famous poetry, Kafir Hun Sar-phira Hun Mujhe Mar Dijiye of Ahmad Farhad here, you will surely love it. Also, don't forget to share it with others.