Zamzama Nala Bulbul Thehre

زمزمہ نالۂ بلبل ٹھہرے

زمزمہ نالۂ بلبل ٹھہرے

میں جو فریاد کروں غل ٹھہرے

نغمۂ کن کے کرشمے دیکھو

کہیں قم قم کہیں قلقل ٹھہرے

جال میں کاتب اعمال پھنسیں

دوش پر آ کے جو کاکل ٹھہرے

رات دن رہتی ہے گردش ان کو

چاند سورج قدح مل ٹھہرے

میرا کہنا ترا سننا معلوم

جنبش لب ہی اگر گل ٹھہرے

جان کر بھی وہ نہ جانیں مجھ کو

عارفانہ ہی تجاہل ٹھہرے

عاشقی میں یہ تنزل کیسا

آپ ہم کیوں گل و بلبل ٹھہرے

تجھ پہ کھل جائے جو راز ہمہ اوست

فلسفی دور و تسلسل ٹھہرے

آنکھ سے آنکھ میں پیغام آئے

گر نگاہوں کا توسل ٹھہرے

کھل گئی بے ہمگی با ہمگی

کل میں جب محو ہوئے کل ٹھہرے

دل سے دل بات کرے آنکھ سے آنکھ

عاشقی کا جو توسل ٹھہرے

کیوں نہ فردوس میں جائے مائلؔ

جب محمد کا توسل ٹھہرے

احمد حسین مائل

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(561) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmad Hussain Mael, Zamzama Nala Bulbul Thehre in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 19 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmad Hussain Mael.