Phool Per Oos Ka Qatra Bhi Ghalat Lagta Hai

پھول پر اوس کا قطرہ بھی غلط لگتا ہے

پھول پر اوس کا قطرہ بھی غلط لگتا ہے

جانے کیوں آپ کو اچھا بھی غلط لگتا ہے

مجھ کو معلوم ہے محبوب پرستی کا عذاب

دیر سے چاند نکلنا بھی غلط لگتا ہے

آپ کی حرف ادائی کا یہ عالم ہے کہ اب

پیڑ پر شہد کا چھتا بھی غلط لگتا ہے

ایک ہی تیر ہے ترکش میں تو عجلت نہ کرو

ایسے موقعے پہ نشانا بھی غلط لگتا ہے

شاخ گل کاٹ کے ترشول بنا دیتے ہو

کیا گلابوں کا مہکنا بھی غلط لگتا ہے

احمد کمال پروازی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(398) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmad Kamal Parwazi, Phool Per Oos Ka Qatra Bhi Ghalat Lagta Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 20 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmad Kamal Parwazi.