Yeh Lag Raha Hai Raag Jaan Pey Laa K Chori Hai

یہ لگ رہا ہے رگ جاں پہ لا کے چھوڑی ہے

یہ لگ رہا ہے رگ جاں پہ لا کے چھوڑی ہے

کسی نے آگ بہت پاس آ کے چھوڑی ہے

گھروں کے آئنے صورت گنوا کے بیٹھ گئے

ہوا نے دھول بھی اوپر اڑا کے چھوڑی ہے

یہ اب کھلا کہ اسی میں مری نجات بھی تھی

جو چیز میں نے بہت آزما کے چھوڑی ہے

ہوا کا جبر کہیں بیچ میں تھما ہی نہیں

تری گلی بھی بہت دل دکھا کے چھوڑی ہے

کمالؔ دیکھنا یہ خیمۂ حسین ہے کیا

کسی نے دل میں کوئی شے جلا کے چھوڑی ہے

احمد کمال پروازی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(934) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmad Kamal Parwazi, Yeh Lag Raha Hai Raag Jaan Pey Laa K Chori Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 20 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmad Kamal Parwazi.