Hamara Ishq Salamat Hai Yani Hum Abhi Hain

ہمارا عشق سلامت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

ہمارا عشق سلامت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

وہی شدید اذیت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

اسی پرانی کہانی میں سانس لیتے ہیں

وہی پرانی محبت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

نہ جانے کب سے در داستاں پہ بیٹھے ہیں

اور انتظار کی ہمت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

طلب کے کرب میں اک مرگ کے دعا گو تھے

طلب میں ویسی ہی شدت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

کسی کے نام پہ ہم دوستی نبھاتے تھے

اور اب بھی ویسی ہی شہرت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

طلب بڑھاتی چلی جا رہی ہے اپنی ہوس

سو قدرے خام قناعت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

کلام میرؔ کے صدقے میں شعر ہوتے ہیں

جو بیت ہے سو قیامت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

عجب یہ شعر ہیں اپنے کہ جن میں ہم بھی نہیں

بس ایک غم کی شرارت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

یہ عشق پیشگی دار و رسن کے ہنگامے

یہ رنگ زندہ سلامت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

امیر شہر ہے بے چین شیخ خوف زدہ

ابھی تلک یہ عداوت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

نہ پوری ہے نہ ادھوری یہ داستان الم

کوئی سنی سی حکایت ہے یعنی ہم ابھی ہیں

احمد عطا

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(896) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Atta, Hamara Ishq Salamat Hai Yani Hum Abhi Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 34 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Atta.