Aam Hai Kocha O Bazaar Main Sarkar Ki Baat

عام ہے کوچہ و بازار میں سرکار کی بات

عام ہے کوچہ و بازار میں سرکار کی بات

اب سر راہ بھی ہوتی ہے سر دار کی بات

ہم جو کرتے ہیں کہیں مصر کے بازار کی بات

لوگ پا لیتے ہیں یوسف کے خریدار کی بات

مدتوں لب پہ رہی نرگس بیمار کی بات

کیجیے اہل چمن اب خلش خار کی بات

غنچے دل تنگ ہوا بند نشیمن ویراں

باعث مرگ ہے میرے لیے غم خوار کی بات

بوئے گل لے کے صبا کنج قفس تک پہنچی

لاکھ پردوں میں بھی پھیلی شب گلزار کی بات

زندگی درد میں ڈوبی ہوئی لے ہے راہیؔ

ایسے عالم میں کسے یاد رہے پیار کی بات

احمد راہی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(578) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Rahi, Aam Hai Kocha O Bazaar Main Sarkar Ki Baat in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Rahi.