Woh Be Niaz Mujhe Uljhano Main Daal Gaya

وہ بے نیاز مجھے الجھنوں میں ڈال گیا

وہ بے نیاز مجھے الجھنوں میں ڈال گیا

کہ جس کے پیار میں احساس ماہ و سال گیا

ہر ایک بات کے یوں تو دیے جواب اس نے

جو خاص بات تھی ہر بار ہنس کے ٹال گیا

کئی سوال تھے جو میں نے سوچ رکھے تھے

وہ آ گیا تو مجھے بھول ہر سوال گیا

جو عمر جذبوں کا سیلاب بن کے آئی تھی

گزر گئی تو لگا دور اعتدال گیا

وہ ایک ذات جو خواب و خیال لائی تھی

اسی کے ساتھ ہر اک خواب ہر خیال گیا

اسے تو اس کا کوئی رنج بھی نہ ہو شاید

کہ اس کی بزم سے کوئی شکستہ حال گیا

احمد راہی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(922) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Rahi, Woh Be Niaz Mujhe Uljhano Main Daal Gaya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Rahi.