Raaz Dron Astain Kashmakash Bayan Main Tha

راز درون آستیں کشمکش بیاں میں تھا

راز درون آستیں کشمکش بیاں میں تھا

آگ ابھی نفس میں تھی شعلہ ابھی زباں میں تھا

وہ جو کہیں تھا وہ بھی میں اور جو نہیں تھا وہ بھی میں

آپ ہی تھا زمین پر آپ ہی آسماں میں تھا

لمس صدائے ساز نے زخم نہال کر دیے

یہ تو وہی ہنر ہے جو دست طبیب جاں میں تھا

خواب زیاں ہیں عمر کا خواب ہیں حاصل حیات

اس کا بھی تھا یقیں مجھے وہ بھی مرے گماں میں تھا

خنجر و دشنہ و سناں یہ تو بہانے ہیں میاں

آپ نہ شرمسار ہوں زخم سرشت جاں میں تھا

حد گماں سے ایک شخص دور کہیں چلا گیا

میں بھی وہیں چلا گیا میں بھی گزشتگاں میں تھا

احمد شہریار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1187) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Shehryar, Raaz Dron Astain Kashmakash Bayan Main Tha in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 20 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Shehryar.